26

کورونا وائرس، فیس بک کے بعد ٹوئٹر نے بھی حیران کن

[ad_1]

کورونا وائرس، فیس بک کے بعد ٹوئٹر نے بھی حیران کن اعدادو شمار جاری کر دئیے

لاہور (ڈیلی پاکستان لائن) چین سے پھیلنے والے کورونا وائرس نے دنیا بھر کو اپنی لپیٹ میں لے لیا ہے جس کے باعث کئی ممالک میں لاک ڈاﺅن ہے اور شہری گھروں میں محصور ہو کر تفریح اور معلومات کے حصول کیلئے انٹرنیٹ کا استعمال کر رہے ہیں۔

سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کی وباءپھیلنے کے بعد پہلی سہ ماہی میں اس کے صارفین کی تعداد 15 کروڑ سے بڑھ کر 16 کروڑ سے زائد ہوگئی ہے۔ٹوئٹر کے سی ای او جیک ڈورسی نے اس بارے میں بتایا کہ ہمارا مقصد عوامی بات چیت کی سہولت فراہم کرنا ہے، ہم نے لوگوں میں ٹوئٹر کے بامقصد استعمال میں اضافے کو دیکھا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ دنیا بھر میں اس وباءکے دوران گھروں تک محدود کروڑوں افراد کی جانب سے انٹرنیٹ پر انحصار بڑھ چکا ہے، کیونکہ بیشتر گھر سے کام کررہے ہیں جبکہ کچھ اسے اپنے پیاروں سے رابطے کے ذریعے کے طور پر استعمال کررہے ہیں۔

قبل ازیں سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس بک نے بھی کچھ ایسے ہی اعداد و شمار جاری کرتے ہوئے بتایا تھا کہ اٹلی میں فیس بک ایپس پر گزارے جانے والے وقت کے دورانئے میں 70 فیصد اضافہ ہوا ہے جبکہ ایک ہفتے میں فیس بک لائیو اور اس کی زیرملکیت ایپ انسٹاگرام کے ویوز دوگنا ہوگئے ہیں۔اس طرح میسجنگ کی شرح میں 50 فیصد سے زائد جبکہ گروپ کالز کی شرح میں ایک ہزار فیصد سے زیادہ اضافہ ہوا۔

دوسری جانب لوگوں کی جانب سے سٹریمنگ سروسز کا استعمال بھی بڑھا ہے جس کو مدنظر رکھتے ہوئے یوٹیوب نے دنیا بھر میں ویڈیوز کا ڈیفالٹ ریزولوشن کم کر دیا ہے۔ گوگل کے ایک ترجمان کا اس بارے میں کہنا تھا کہ ہم دنیا بھر میں حکومتوں اور نیٹ ورک آپریٹرز کے ساتھ کام کریں گے تاکہ اس صورتحال میں انٹرنیٹ پر دباؤ کو کم از کم کیا جاسکے۔معروف سٹریمنگ ویب سائٹ نیٹ فلیکس نے بھی یورپ میں سٹریمنگ کوالٹی کو 25 فیصد تک کم کیا جبکہ ایپل اور ایمیزون کی جانب سے بھی یورپ میں ایسا ہی کیا گیا۔

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجیکورونا وائرس



[ad_2]

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں