راولپنڈی 22

ملک بھر کی طرح راولپنڈی شہر میں بھی کرونا کے وار تیزی سے جاری

میٹرو پولیٹن کارپوریشن آفس میں تعینات گریڈ 19کے آفیسر کرونا کے باعث زندگی کی بازی ہار گ
راولپنڈی میٹروپولیٹن کارپوریشن آفس میں تعینات، ایم او آر، کرونا کا شکار ہو کر زندگی کی بازی ہار گئے قبل ازیں تین ملازمین بھی کرونا کا شکار ہو چکے ہیں جنہیں قرنطینہ کر دیا گیاہے تاہم مزید دو افسران بخار کے باعث رخصت پر چلے گئے دفاتر میں حفاظتی اقدامات نہ ہونے کے باعث افسران و ملازمین میں سخت تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے۔تفصیلات کے مطابق راولپنڈی میٹرو پولیٹن کارپوریشن آفس میں حا ل ہی میں تعینات ہونیوالے میونسپل آفیسر ریگولیشن(ایم او آر) رضوان احمد کرونا سے جنگ لڑتے ہوئے زندگی کی بازی ہار گئے ہیں جنہیں آج ان کے آبائی علاقے لاہور ماڈل ٹاؤن میں سپرد خاک کیا جائیگا۔معلوم ہوا ہے کہ 58سالہ مذکورہ افسر جن کا تبادلہ عید سے کچھ دن قبل لاہور سے راولپنڈی میٹروپولیٹن کارپوریشن آفس میں بطور ایم او آر کیا گیا تھاجو بخار اور طبیعت خرابی پر واپس لاہور چلے گئے تھے جہاں ٹیسٹ کرانے کے بعد ان کا کرونا ٹیسٹ پازیٹو آیا تھاکچھ دن ہسپتال میں زندگی اور موت کی کشمکش میں رہنے کے بعد آج وہ اپنے خالق حقیقی سے جاملے۔قبل ازیں میٹروپولیٹن کارپویشن آفس کے تین ملازمین جن میں کمپیوٹر آپریٹر شیخ ارشد، بلڈنگ انسپکٹر ملک عثمان، جبکہ ٹیکس انسپکٹر طارق بیگ کا بھی کرونا ٹیسٹ پازیٹو آیا تھا جو تاحال قرنطینہ میں ہیں جبکہ دو مزید افسران جن میں میونسپل آفیسر پلاننگ،اور میونسپل آفیسر آرکیٹیکٹ بخار میں مبتلا ہو کر رخصت پر چلے گئے ہیں جس کی وجہ سے میٹرو پولیٹن کارپویشن افسران و ملازمین میں سخت تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے آفس ذرائع کا کہنا ہے کہ دفتر میں کسی قسم کے کوئی حفاظتی اقدامات نہیں کئے گئے روازنہ درجنوں افراد بغیر کسی حفاظتی اقدامات کے دفتر میں آتے ہیں جبکہ حکومت کی جانب سے معاشرتی فاصلوں (Social Distance) کو برقرار رکھنے اور اس پر عمل پیرا ہونے کی بجائے مسلسل نظر انداز کیا جارہا ہے جو کسی بھی بڑے المیے کا پیش خیمہ ثابت ہوسکتا ہے۔