جرائم پیشہ 84

راولپنڈی پولیس کے کامیاب ”آپریشن اگینسٹ ٹیرر“ کے دوران ٹاپ10اور ٹاپ20کریمنلز کی گرفتاری سوشل میڈیا پر ٹاپ ٹرینڈ بن گئی،

راولپنڈی :راولپنڈی پولیس کے کامیاب ”آپریشن اگینسٹ ٹیرر“ کے دوران ٹاپ10اور ٹاپ20کریمنلز کی گرفتاری سوشل میڈیا پر ٹاپ ٹرینڈ بن گئی،سی پی او نے ”ٹیرر گروپس“ کے متاثرین سے رابطہ کر کے ایک ایک قانون شکنی کی ایف آئی آر درج کرنے کی ہدایات جاری کر دیں،گرفتار ملزمان کے ساتھی اور سہولت کارروپوش ہونے کے بعد سوشل میڈیا سے بھی غائب،سی پی او نے ”ٹیرر گروپس“ کی سوشل میڈیا پربھی ہر قسم کی سرگرمی کو مانیٹر کرنے کاحکم دے دیا،تفصیلات کے مطابق سٹی پولیس آفیسر ڈی آئی جی محمد فیصل رانا کے خصوصی احکامات پر شروع ہونے والے ”آپریشن اگینسٹ ٹیرر“ کے دوران معاشرے میں خوف وہراس کی علامت سمجھے جانے والے قانون شکن عناصر کی گرفتاری سوشل میڈیا پر پنڈی پولیس کی شاندار کارکردگی کا ٹاپ ٹرینڈ بن گئی ہے،وزیر اعظم عمران خان اور وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی طرف سے سی پی او فیصل رانا اور راولپنڈی پولیس کو ان ”ٹیرر گروپس“ کے خلاف بھر پور کارروائی پرملنے والی شاباش اور اعلیٰ سطحی اجلاس میں اس کے تذکرے کے بعد راولپنڈی پولیس کو سوشل میڈیا پر ملنے والی پذیرائی میں کئی گنا اضافہ ہوا ہے،جن ”ٹیرر گروپس“ کے خلاف راولپنڈی پولیس آپریشن کر رہی ہے وہ تمام گروپس سوشل میڈیا پر اپنی قانون شکنیوں کی ویڈیوز اور تصویر اپ لوڈ کرتے تھے آپریشن شروع ہونے سے قبل عوام اپ لوڈ کی گئی قانون شکن عناصر کی ویڈیوز اور تصاویر پر کسی قسم کا کمنٹ کرنے سے گریز کرتے تھے اگر کوئی شخص ان قانون شکنیوں کی اپ لوڈ کی گئی ویڈیوز اور تصاویر پر کمنٹ کر دیتے تو یہ کریمنلز اس کا پیچھا کر کے اس کا جینا دوبھر کر دیتے تاہم راولپنڈی پولیس کے ”آپریشن اگینسٹ ٹیررز“ کی کامیابی کے بعد سوشل میڈیا پر عوام کی طرف سے بھر پور کمنٹس کئے جا رہے ہیں عوام کا کہنا ہے کہ سی پی او فیصل رانا نے قانون کو چیلنج کرنے والے ”ٹیرر گروپس“ کے خلاف نتیجہ خیز کارروائی کر کے راولپنڈی کو پرامن ترین ضلع بنانے کے اپنے اعلان پر عمل در آمد شروع کر دیا ہے،سیاسی کارکنوں کی طرف سے اس آپریشن میں سب سے زیادہ پذیرائی ان قانون شکنوں کی گرفتاری پر کی گئی ہے جو پیسے لے کر سیاسی جلسوں میں ہوائی فائرنگ کرتے تھے جن کی گرفتاری ایس پی پوٹھوہار سید علی کی زیرنگرانی ایس ایچ او مورگاہ اعزاز عظیم کے ذریعے عمل میں آئی،دلچسپ بات یہ ہے کہ ”آپریشن اگینسٹ ٹیرر“ کی کامیابی کے بعد جہاں پر گرفتار ہونے والے ٹاپ10اور ٹاپ20کریمنلز کے ساتھی اور سہولت کار زیر زمین چلے گئے ہیں وہاں پر یہ قانون شکن سوشل میڈیا سے بھی غائب ہوتے جارہے ہیں،سی پی او فیصل رانا نے تینوں ڈویژنل ایس پیز کو ہدایت کی ہے کہ قانون نافذ کرنے والے دیگر اداروں سے کوآرڈ ینیشن کر کے ان قانون شکن گروپس کی سوشل میڈیا سرگرمیوں کو مکمل مانیٹر کریں،اگر کوئی قانون شکن سوشل میڈیا کے ذریعے قانون کو چیلنج کرتا ہے تو اسے فوری تلاش کر کے گرفتار کیا جائے،سی پی او فیصل رانا نے یہ حکم بھی دیا ہے ”ٹیرر گروپس“کے جن متاثرین کی ایف آئی آرز درج نہیں ہوئیں ان سے رابطہ کر کے ایک ایک قانون شکنی کی ایف آئی آر درج کی جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں