Police Murree 86

پنڈی پولیس کی طرف سے سنگین وارداتوں کو ٹریس کرنے اور ملزمان کی گرفتاری کا سلسلہ جاری

پنڈی پولیس کی طرف سے سنگین وارداتوں کو ٹریس کرنے اور ملزمان کی گرفتاری کا سلسلہ جاری،بزرگ اوورسیز پاکستانی کو اغواء کر کے اس سے ڈکیتی کی واردات کرنے والے ملزم کو گرفتار کر لیا گیا،ملزمان نے بزرگ شہری کی برہنہ ویڈیوبنا کر اسے بلیک میل بھی کیا،ملزم کی گرفتاری پر بزرگ شہری کی دعائیں،تفصیلات کے مطابق ایس پی پوٹھوہار سید علی نے سٹی پولیس آفیسر ڈی آئی جی محمد فیصل رانا کو بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ تھانہ ائیر پورٹ کے علاقہ میں 11سال تک ہانگ کانگ رہنے والے 60/65سالہ اوور سیز اپنی کار فروخت کرنے گیا جسے ملزمان نے زبردستی اپنی گاڑی میں بٹھایا نامعلوم مقام پر لے جا کرہاتھ پاؤں باندھے اس سے نقدی وغیرہ چھینی ملزمان بزرگ پر تشدد کر کے اسے کہتے رہے کہ بیٹے کو فون کر کے50لاکھ روپے منگواؤ،ملزمان میں ایک عورت بھی شامل تھی،بزرگ شہری نے پولیس کو یہ بھی بتایا کہ ملزمان اس کی برہنہ ویڈیو بھی بناتے رہے، تھانہ ائیر پورٹ میں اغواء اور ڈکیتی سمیت دیگر دفعات کے تحت مقدمہ درج کر لیا گیا ہے وقوعہ کی اطلاع ملنے پر پولیس نے جدید سائنسی ٹیکنالوجی کو استعمال میں لاتے ہوئے دو ملزمان کو گرفتار کر لیا جن میں ملزم غلام فرید اور ایک عورت شامل ہے،جن سے تفتیش جاری ہے،ملزمان سے ویڈیو ریکور کرنے کے لئے اقدامات کئے جا رہے ہیں،سی پی او فیصل رانا نے بدترین اخلاقی جرم کی سنگین واردات ٹریس کرنے اور ملزمان کی گرفتاری پر ایس پی پوٹھوہار سید علی کو شاباش دیتے ہوئے کہا کہ پنڈی پولیس کی کارکردگی میں پوٹھوہار ڈویژن پولیس کی کارکردگی کا بڑا حصہ ہے،پنڈی پولیس جس طرح بدترین اخلاقی جرائم کے ملزمان کو گرفتار کر رہی ہے اس سے پنڈی کی قانون پسند عوام کا راولپنڈی پولیس پراعتماد مستحکم ہو گیا ہے،سی پی او نے ہدایت کی کہ اس وقوعہ کی دیگر ملزمان کو بھی گرفتار کر کے ان کے سہولت کاروں کو بھی گرفتار کیا جائے،سی پی او نے کہا کہ ملزمان سے تفتیش کے دوران اس بات کا جائزہ بھی لیا جائے کہ ملزمان کسی بڑے منظم گینگ سے تعلق تو نہیں رکھتے اگر ایسا ہے تو سارے گینگ کو گرفتار کیا جائے،سی پی او نے کہا کہ ہم نے راولپنڈی کی عوام کو ہر طرح کے اخلاقی جرائم کر کے عوام کو بلیک میل کرنے والوں کو قانون کے شکنجے میں لانا ہے،فیصل رانا نے کہا کہ اوور سیز پاکستانی ملکی معیشت کے لئے ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتے ہیں ان کی مدد کرنا اصل میں ملکی معیشت کی مدد کرنا ہے سی پی او نے کہا کہ انہیں اس مقدمہ کے فالو اپ اقدامات سے روزانہ آگاہ رکھا جائے،جتنی جلدی ہو سکے جدید سائنسی ٹیکنالوجی کو استعمال میں لا کر سارے ملزمان گرفتار کئے جائیں اور اوورسیز بزرگ شہری کو ان اقدامات سے آگاہ رکھا جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں