Farrukh Khokhar 15

فرخ کھوکھر کے لسانی منافرت اور بغاوت کی دھمکی

راولپنڈی پولیس کی جانب سے فرخ کھوکھر کے لسانی منافرت اور بغاوت کی دھمکی پر مبنی ویڈیو بیان سامنے آنے پر دہشت گردی کا ایک اور مقدمہ درج، فرخ کھوکھر کے خلاف انسداد دہشتگردی ایکٹ اور تعزیرات پاکستان کی متعلقہ دفعات کے تحت تھانہ ائیر پورٹ میں مقدمہ درج کیا گیا۔تفصیلات کے مطابق فرخ کھوکھر کے لسانی منافرت اور بغاوت کی دھمکی پر مبنی ویڈیو بیان سوشل میڈیا پر سامنے آنے پر تھانہ ائیرپورٹ پولیس نے فرخ کھوکھر کے خلا ف انسداد دہشتگردی ایکٹ اور تعزیرات پاکستان کی متعلقہ دفعات کے تحت مقدمہ درج کرلیا،امتیاز عرف تاجی کھوکھر اور فرخ کھوکھر کے خلاف قتل، قبضہ اور دہشت گردی ایکٹ سمیت متعدد سنگین مقدمات درج ہیں،فرخ کھوکھر پر سال 2005 سے قتل،اقدام قتل اور دہشت گردی کے کئی مقدمات درج ہیں،نقص امن اور خطرناک کاروائیوں میں ملوث ہونے کے پیش نظر دونوں افراد کے نام حکومت کی جانب سے دہشت گردی ایکٹ کے تحت فورتھ شیڈول کی لسٹ میں درج ہیں،فورتھ شیڈول میں شامل افراد قانون کے مطابق اپنی نقل و حرکت کے بارے میں پولیس کو آگاہ کرنے کے پابند ہیں اور بلا اجازت اپنا رہائشی علاقہ بھی نہیں چھوڑ سکتے،قانون سب سے بالاتر ہے، ریاست کی رٹ کو چیلنج نہیں کیا جا سکتا ایسا کرنے والوں کے ساتھ آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے گا،ویڈیو بیان ذاتی مفاد کے لئے لسانی منافرت کو ابھار کر مذموم مقاصد کی تکمیل کی ایک بھونڈی کوشش ہے جو جرائم پیشہ عناصر کے خلاف راولپنڈی پولیس کے عزم پرہرگز اثر انداز نہیں ہو سکتی،راولپنڈی پولیس کو ایسے بھونڈے اور دھمکی آمیز بیانوں سے مرعوب نہیں کیا جا سکتا، قانون اپنا راستہ خود بنائے گا،پاکستان میں بسنے والے تمام افراد بنا تخصیص رنگ و نسل صرف پاکستانی ہیں پنجابی سے منسوب کر کے لسانی بنیادوں پر انتشار پیدا کرنے کی کوشش کی گئی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں