CORONAVIRUS-SINDH-AFP.jpg 36

سندھ میں ایک دن میں کرونا وائرس کے ریکارڈ 3038 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں

فوٹو : اے ایف پی

سندھ میں ایک دن میں کرونا وائرس کے ریکارڈ 3038 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے بتایا ہے کہ گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران 10 ہزار سے زائد ٹیسٹ کئے گئے، مجموعی طور پر متاثرہ مریضوں کی تعداد 46 ہزار 828 ہوگئی جبکہ مزید 38 افراد موت کے منہ میں چلے گئے، اموات کی تعداد 776 تک پہنچ گئی۔

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کی جانب سے آج (جمعرات کو) کرونا وائرس کی تازہ ترین صورتحال سے متعلق جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران صوبہ بھر میں دس ہزار 88 ٹیسٹ کئے گئے، جن میں 3 ہزار 38 (30 فیصد سے زائد) افراد میں کرونا کی تشخیص ہوئی، مجموعی طور پر سندھ میں 2 لاکھ 65 ہزار 705 ٹیسٹ کئے گئے ہیں، جس میں 46 ہزار 828 کیسز سامنے آئے، گزشتہ 24 گھنٹوں میں 38 مزید مریض انتقال کرگئے، جس کے بعد انتقال کرجانیوالوں کی تعداد 776 ہوگئی۔

ان کا کہنا ہے کہ 24 ہزار 5 مریض زیر علاج  جبکہ 22 ہزار 47 صحتیاب ہوچکے ہیں، اس وقت 636 مریضوں کی حالت تشویشناک ہے، کرونا کے 79 مریض وینٹی لیٹرز پر ہیں۔

وزیراعلیٰ سندھ کے مطابق 22 ہزار 324 مریض گھروں اور 60 مراکز جبکہ ایک ہزار 121 مریض مختلف اسپتالوں میں زیرعلاج ہیں، آج 1040مریض صحتیاب ہوگئے۔

مراد علی شاہ نے چوبیس گھنٹوں میں رپورٹ ہونیوالے کیسز کی تفصیلات سے آگاہ کرتے ہوئے بتایا کہ مثبت آنیوالے 3 ہزار 38 کیسز میں سے 2 ہزار 145 کا تعلق کراچی سے ہے، ضلع جنوبی کے 650، شرقی 569، ضلع وسطی میں 307 نئے کیسز سامنے آئے، ملیر 284، کورنگی 201 اور ضلع غربی میں بھی 134 کیسز رپورٹ ہوئے۔

انہوں نے بتایا کہ سکھر میں 95، حیدرآباد 88، لاڑکانہ 77، گھوٹکی 67، نوابشاہ 26، شکارپور اور جیکب آباد میں 23، 23 نئے کیسز سامنے آئے، جامشورو اور خیرپور میں 22، 22 اور سانگھڑ 20 نئے کیسز رپورٹ ہوئے، دادو 19، بدین 13، سجاول 11 اور مٹیاری میں بھی 10 مزید افراد میں کرونا کی تشخیص ہوئی ہے۔

مراد علی شاہ کا کہنا ہے کہ ٹھٹھہ 8، کشمور، میرپورخاص اور نوشہروفیروز میں 7، 7، ٹنڈو محمد خان 5، ٹنڈو الہیار 3 اور قمبر شہدادکوٹ میں ایک نیا کیسز سامنے آیا ہے۔

وزیراعلیٰ سندھ نے ایک بار پر شہریوں کو تنبیہ کی کہ ماہرین کے مطابق اگر ایس او پی پر عملدرآمد نہیں ہوا تو 30 جون تک 3 لاکھ کیسز ہوجائیں گے، خدارا عوام صورتحال کو سمجھیں۔

انہوں نے کہا کہ آج جتنے کیسز کراچی میں آئے ہیں یہ ہماری سوچ سے بھی زیادہ ہیں، ٹیسٹوں کا 30 فیصد نتیجہ مثبت آرہا ہے جو دنیا میں سب سے زیادہ ہے، اگر اب بھی عوام صورتحال کو نہیں سمجھ پائی تو حالات بہت خراب ہوجائیں گے۔

وزیراعلیٰ سندھ نے عوام سے اپیل کی کہ برائے مہربانی ایس او پیز پر عمل کریں اور کم سے کم جون کے مہینے میں گھروں پر رہیں، اللہ ہم سب کو حفظ و امان میں رکھیں۔

PM, IMRAN KHAN, CORONAVIRUS, COVID19, COVID-19, PAKISTAN, HEALTH, LOCKDOWN, WHO, PUNJAB, SINDH, KP BALOCHISTAN,