اسلام آباد 17

اسلام آباد تجاوزات کی آڑ میں غریب اور دہاڑی دار مزورورں سے دیہاڑیاں لگانا شروع کر دیں

اسلام آباد کے مضافاتی علاقے سنگجانی جی ٹی روڈ پر سی ڈی اے انفورسمنٹ کی بد معاشیاں تجاوزات کی آڑ میں غریب اور دہاڑی دار مزورورں سے دیہاڑیاں لگانا شروع کر دیں سی ڈی اے انفورسمنٹ کے سپروائزر طارق اور اسکے عملے نے جی ٹی روڈ پر سردائی کے ٹھیہ سے کرسیاں اٹھائیں اور بعد میں کرسیاں چھوڑنے کے لئے پیسوں کا مطالبہ کیا تفصیلات کے مطابق سردائئ کے ٹھیہ منیر نامی شخص کا ہے جو پنجاب کے دور دراز علاقے مظفر گڑھ سے ا کر بچوں کا رزق کما رہا ہے اسے آئے روز سی ڈی اے کا عملہ بھتہ خوری کے لئے تنگ کرتا ہے اس کا سامان اٹھا لیتے ہیں اور پھر پیسے دے کر چھوڑ دیتے ہیں قابل ذکر بات یہ ہے کہ 26 نمبر چونگی سے لیکر سنگجانی تک روڈ کے دونوں اطراف بے شمار نا جائز تجاوزات کی بھر مار ہے جہاں سے سی ڈی اے کا عملہ منتھلیاں لیتا ہے اور افسران کو سب اچھا کی رپورٹ دیتا ہے اور جو منتھلی نہ دے اسکا سامان ضبط کرنے کے بعد پیسے لیکر چھوڑ دیا جاتا ہے کیا یہ محکمہ سی ڈی اے غریبوں کے منہ سے نوالا چھیننے کے لئے بنایا گیا ہے اس ملک خداد پاکستان پر غریبوں کا بھی اتنا ہی حق ہے جتنا اس ملک میں موجود اشرافیہ کا ہے کیوں اس ملک میں دو قانون ہیں غریب کے لئے اور ہے سی ڈی اے کے اعلیٰ حکام سے اپیل ہے اسکا نوٹس لیا جائے اور متعلقہ سپروائزر کو معطل کر کے انکوائری کی جائے ،،،،،، نوٹ ،،اس خبر کے ساتھ اس راشی سپروائزر طارق کی ویڈیو بھی ملاحظہ فرمائیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں