Dollars worth of debt 18

30 کروڑ ڈالرمالیت کے قرضہ کی منظوری دیدی

اسلام آبادایشیائی ترقیاتی بینک (اے ڈی بی) نے پاکستان میں کلی معیشت کے استحکام کیلئے 30 کروڑ ڈالرمالیت کے قرضہ کی منظوری دیدی ہے، بینک پاکستان میں تجارتی مسابقت اوربرآمدات میں تنوع کے ذریعہ پاکستان میں میکرواکنامک استحکام کوفروغ دینے کیلئے 30 کروڑڈالر بطور پالیسی قرضہ دے گا، اس ضمن میں فریقین کے درمیان معاہدے پرجمعہ کویہاں دستخط ہوگئے ۔پاکستان کی طرف سے سیکرٹری اقتصادی امورڈویژن نوراحمد اورایشیائی ترقیاتی بینک کی جانب سے کنٹری ڈائریکٹرژاو ہانگ ینگ نے معاہدے پردستخط کئے۔ وفاقی وزیراقتصادی امورمخدوم خسروبختیار اوردیگراعلیٰ حکام بھی اس موقع پرموجود تھے۔اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے مخدوم خسروبختیارنے کہاہے کہ حکومت تجارت کو فروغ دینے کیلئے برآمدی ٹیرف اور ٹیکس کے شعبہ میں اصلاحات کر رہی ہے اوراس ضمن میں کئی اقدامات اٹھائے گئے ہیں۔انہوں نے کہاکہ معیشت کے استحکام کیلئے اٹھائے جانیوالے اقدامات اورپائیدارپالیسی کے نتیجہ میں 15 سالوں بعد حسابات جاریہ کے کھاتوں میں استحکام دیکھنے میں آیاہے اورحسابات جاریہ کے کھاتے فاضل ہوگئے ہیں۔ جس کابین الاقوامی سطح پربھی اعتراف کیا جارہاہے ،دنیا موجودہ حکومت کی مضبوط معاشی پالیسیوں کا اعتراف کر رہی ہے۔ انہوں نے کہاکہ مضبوط معیشت ہماری حکومت کی اولین ترجیح ہے۔عالمی بینک کنٹری ڈائریکٹرنے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے حکومت کی معاشی پالیسیوں کی تعریف کی اورکہاکہ کورونا کے عالمگیروبا کے باوجود پاکستان کی معیشت میں استحکام رہاہے جوخوش آئند ہے۔ دوسری جانب بین کی جانب سے جاری بیان میں بینک کیپرنسپل پبلک منیجمنٹ سپیشلسٹ حرانیا موکوپادے نے کہاہے کہ کوویڈ 19 کی وبا نے پاکستان کوایک وقت میں نشانہ بنایا جب ملک میکرواکنامک بحالی کی سفر پرتھا۔انہوں نے کہاکہ حکومت کی جانب سے معاشی استحکام کیلئے اٹھائے جانیوالے اقدامات کے حوصلہ افزا نتائج برآمد ہورہے ہیں اورایشیائی ترقیاتی بینک کے اس پروگرام سے پاکستان کوبرآمدی شعبہ میں مسابقت بڑھانے میں مددملیگی،کوویڈ19 کے اثرات کے تناظرمیں برآمدات اورتجارت میں مسابقت اورتنوع بہت اہمیت کاحامل ہے۔انہوں نے بتایا کہ اییشائی ترقیاتی بینک کے پروگرام سے پاکستان کوحسابات جاریہ کے خساروں سے پائیداربنیادوں پربحالی اوربرآمدی شعبہ میں تنوع میں اضافہ کی کوششوں کوتقویت ملیگی۔اس پروگرام سے ٹیرف اورٹیکس سے متعلق پالیسی اصلاحات کوآگے بڑھانے میں بھی مددملیگی جس سے بین الاقوامی سطح پرتجارتی وبرآمدای مسابقت میں بہتری آئیگی ، پروگرام سے ایکریڈیشن کے اداروں ، ایکسپورٹ وامپورٹ بینک آف پاکستان اورپاکستان سنگل ونڈوز جیسے اداروں کو بھی مضبوط بنایاجاسکے گا۔ ایشیائی ترقیاتی بینک نے کہاہے کہ نیا قرضہ تجارت ومسابقت پروگرام کے ذیلی پروگرام ٹو کے تحت دیا جارہاہے، اس پروگرام کے پہلے مرحلہ میں ایشیائی ترقیاتی بینک نے حکومت کو خام مال اورانٹرمیڈیٹ اشیا پرٹیرف اورایڈہاک ڈیوٹیز کے خاتمہ کیلئے اصلاحات کے پروگرام شروع کرنے میں معاونت فراہم کی تھی۔اسی طرح ای کامرس ، تجارت میں سہولیات فراہم کرنے والے اداروں کی مضبوطی اوربرآمدی سرٹفیکشن کے عمل میں آسانی کیئے کئی اقدامات بھی اٹھائے گئے ہیں۔بیان میں کہاگیاہے کہ بینک ترقیاتی شراکت داروں اورڈونرز کے اشتراک کارسے پاکستان کے ساتھ معاونت کا سلسلہ جاری رکھے گا۔اس پروگرام سے مسابقت کوفروغ ملیگی جس سے پاکستان کے زرمبادلہ کے ذخائرمیں تیزی سے اضافہ ہوگا۔\