Welfare work is the first priority 10

پوری قوم کو فخرہے عوام کی خدمت اور فلاحی کام اولین ترجیح ہے۔

گوجرانوالہ پاکستان تحریک انصاف خواتین ونگ کی سٹی صدر شکیلہ سلیم راناایڈووکیٹ، جنرل سیکرٹری ثمائرہ صدیقی نے کہاکہ وزیراعظم عمران خان ایک دیانتدار لیڈر ہیں جس پر پوری قوم کو فخرہے عوام کی خدمت اور فلاحی کام اولین ترجیح ہے۔ہماری حکومت صحت اور تعلیم کے شعبہ پر بھرپور توجہ دے رہی ہے،پاکستانی قوم ملک دشمن قوتوں کے عزائم خاک میں ملادیں گے، افواج پاکستان دشمن کی جارحیت کا منہ توڑ جواب دے گی،روزگار سکیم کے تحت آ سان قرضوں کی فراہمی بیروزگاری میں کمی کے لیے اہم کردار ادا کرے گی۔ مہنگائی پر کنٹرول کے لیے ہنگام بنیادوں پر کام جاری ہے۔ پہلی بار حکومتی سطح پردوہرے نظام تعلیم کے خاتمے کے لیے سنجیدہ اقدامات لیے جا رہے ہیں۔ان خیالات کا اظہارانہوں نے گذشتہ روز تحریک انصاف خواتین ونگ سٹی کے عہدیداران کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ا س موقع پر ایڈیشنل جنر ل سیکرٹری سونیا ، نائب صدر تمکین نقوی ، انفارمیشن سیکرٹری سمیرا ابوبکر ، فنانس سیکرٹری نسرین کوثر کے علاوہ دیگر نے شرکت کی۔ شکیلہ سلیم رانانے کہا کہ وز یر اعظم عمران خان کا یہ موقف درست ثابت ہوا ہے کہ جب بھی احتساب ہوگا تو کرپشن کرنے اور اس میں سے حصہ وصول کرنے والے اکٹھے ہو جائیں گے ،یہ عوام کو روزگار دلانے کیلئے نہیں بلکہ اپنی بیروزگاری کا دورانیہ طویل ہونے پر باہر نکلے ہیں وزیراعظم کی قیادت میں کرپٹ عناصر کا بلاامتیاز احتساب جاری رہے گا۔ اپوزیشن رہنما لوٹ مار کے ذریعے اکٹھی کی گئی دولت بچانے کے ایجنڈے پر چل رہے ہیں۔ اداروں کے خلاف باتیں کرنے والے ملک و قوم کے دوست نہیں، دشمن ہیں۔ ملک دشمن بیانیہ نام نہاد لیڈروں کے ذہنی افلاس کا واضح ثبوت ہے۔ ملکی مفادات کے خلاف ہر عمل اور ہر بیان قابل مذمت ہے۔ ملک میں افراتفری پھیلانا سیاست نہیں، سیاست نیک جذبے اور عوام کی خدمت کا نام ہے۔ عوام کو دھوکہ نہیں دیا جاسکتا، وہ جانتے ہیں کون سچا ہے اور کون جھوٹا،انہوں نے کہا کہ11جماعتوں کا غیر فطری اتحاد اکیلے عمران خان جیسے ایماندار لیڈر کے سامنے بے وقعت ہے۔اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے اداروں کو متنازعہ بنانے کی سازش بری طرح ناکام ہوئی۔افسوس کا مقام ہے کہ اپوزیشن نے پہلے کرونا پرسیاست چمکانے کی کوشش کی اور اب اپوزیشن کی جانب سے اداروںکے خلاف بیان بازی قابل مذمت ہے باشعور عوام اداروں کے ساتھ کھڑے ہیں۔ قوم نے اپوزیشن کا شرانگیز بیانیہ یکسر مسترد کر دیا ہے اپوزیشن جماعتوں کو منفی سیاست سے توبہ کرلینی چا ہیے، کرونا کیسوں کی تعداد اور مریضوں کی اموات بڑھی ہیں شہریوں سے اپیل ہے کہ وہ احتیاطی تدابیر پر من وعن عمل کریں۔