PM-Lahore 53

وزیراعظم عمران خان کا لاہور میں پریس کانفرنس سے خطاب

لاہور وزیراعظم عمران خان نے سموگ اور ماحولیاتی آلودگی پر قابو پانے کیلئے جامع پروگرام کا اعلان کردیا،2020ءتک پٹرول یورو 4 پر منتقل کردیں گے، شہر کے اندر بسیں ہائبرڈ یا بجلی پر چلائی جائیں گی، اینٹوں کے بھٹوں کو زگ زیگ ٹیکنالوجی پر چلانے کیلئے مراعات دی جائیں گی، لاہور میں دس سال میں 70 فیصد درخت کاٹ دیئے گئے۔ ہفتہ کو لاہور میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے لاہور، گوجرانوالہ، فیصل آباد سمیت ملک کے دیگر شہروں میںسموگ اور ماحولیاتی آلودگی پر قابو پانے کیلئے جامع پروگرام کا اعلان کیا۔ انہوں نے کہا کہ سموگ سے بزرگ اور بچے بری طرح متاثر ہو رہے ہیں اور اس سے سانس کی بیماریاں تیزی سے پھیل رہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ماحولیاتی آلودگی ایک خاموش قاتل ہے۔ یہ مسئلہ صرف لاہور، گوجرانوالہ، فیصل آباد میں نہیں بلکہ کراچی اور دیگر شہروں میں بھی ہے۔وزیراعظم نے ماحولیاتی آلودگی پر قابو پانے کیلئے اقدامات کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ ہم 50 سے 60 فیصد پٹرول باہر سے درآمد کرتے ہیں، اب حکومت نے 2020ءتک پٹرول یورو 4 پر منتقل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس سے فضاءمیں بہتری پر 90 فیصد اثر پڑے گا۔ وزیراعظم نے ملک کی آئل ریفائنریوں کو تین سال کے اندر اپنی ٹیکنالوجی بہترکرنے کی ہدایت کی۔ وزیراعظم نے کہا کہ چاول کی فصلوں کو جلانے کی بجائے اسے بروئے کار لایا جائے گا۔ اس کے علاوہ لاہور میں 60ہزار کنال پر جنگلات اگائیں گے اس سے بھی ہوا صاف ہوگی۔وزیراعظم نے کہا کہ گزشتہ بیس سالوں میں حکومتوں نے ماحولیاتی آلودگی پر قابو پانے کیلئے اقدامات نہیں کئے۔انہوں نے کہاکہ الیکٹرک گاڑیوںکیلئے آٹو انڈسٹری سے بات چل رہی ہے۔حکومتی اقدامات سے تین سال میں ماحولیاتی آلودگی میں خاصی کمی آئے گی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں