Murree Police 33

مری میں پولیس گردی گھر سے چار لاکھ ستر ہزار نقد کیس اور نو تولے سونا بھی ساتھ لے گئے

مری پولیس کی اوسیاہ رتیاں باڑیان مری میں پولیس گردی کی بد ترین مثال رات کی تاریکی میں گھر میں گھس کر چادر اور چار دیواری کا تقدس بڑی طرح پامال ۔گھر کے دروازے توڑ کر خواتین اور بچوں پر تشدد اور شدید فائرنگ علاقہ میں خوف و حراس پھیل گیا ۔گھر سے چار لاکھ ستر ہزار نقد کیس اور نو تولے سونا بھی ساتھ لے گئے ۔۔لواحقین کا الزام ۔گھر سے سوتے لقمان اور عثمان تو سوتے میں اٹھا کر ساتھ گئے اور منشیات کے پرچے دونوں بھائیوں پر اعلعدہ اعلعدہ مقدمات 9 سی کے درج کر دئے گئے ۔۔
لواحقین نے وزیر اعظم پاکستان ۔چیف جسٹس آف پاکستان ۔وزیر اعلی پنجاب آئی جی پنجاب سے انصاف کی اپیل کر دی ۔حکومتیں بندل گئیں لیکن پنجاب پولیس کی پولیس گردی نہ بدل سکی۔
تفصیلات ۔کے مطابق اوسیاہ کے گاوں دتیان باڑیان میں میں اکبر حیسن ولد ایوب مرحوم کے گھر رات کی تاریکی میں پولیس نے ظلم کی انتہا کر دی ۔بغیر کسی وارنٹ گرفتاری کے گھر ریٹ کرتے ہوئے شدید فائرنگ کی اور گھر کے دروازے توڑ کر خواتین اور معصوم بچوں پر شدید تشدد کیا گیا اور گھر کی الماری کا سیف توڑ کر لواحقین کے مطابق چار لاکھ ستر ہزار نقد اور نو تولے سونا لوٹ کر دونوں مزدور بھائیوں کو ساتھ لے گئے جبکہ لواحقین کا کہنا ہے کہ تیسرے بھائی عمران کو پولیس نے غائب کر دیا۔
اہلیاں علاقہ کا کہنا ہے کہ اس علاقہ میں پولیس کی پولیس گردی کی شدید مذمت کرتے ہیں جبکہ یہ کیس زمین کا ہے جس کو دوسرا رنگ دیا گیا ۔دوسری با اثر پارٹی کے عزیز سی پی او آفس راولپنڈی میں ملازم ہیں جنھوں نے مری پولیس کے ساتھ زمین ہتھیانے کے لئے یہ کاروائی ڈلوائی ۔جبکہ لواحقین کی والدہ کا کہنا ہے کہ پولیس والوں نے دھمکی دی ہے کہ اگر یہ زمین ان کو نہ دی گئی تو تماری بیٹوں اور بچوں مار دینے کی دھمکیاں دی ہیں ۔۔اہلیاں علاقہ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ جتنی شدید فائرنگ رات کی تاریکی میں کی گئی اس کی مثال نہیں ملتی ۔پولیس نے دو بیگناہ بھائیوں کو گرفتار کر کے منشیات کی من گھڑک ایف آئی آر دو عدد بھائیوں پر کی گئی اس کی ہم شدید مذمت کرتے ہیں اور وزیر اعلی پنجاب آئی جی پنجاب سے اس کیس کی جوڈیشل انکوائری کا مطالبہ کرتے ہیں ۔اہلیاں علاقہ کا کہنا ہے کہ اگر متاثرہ خاندان کو پولیس گردی پر انصاف نہ ملا تو اہلیاں علاقہ اس پر شدید احتجاج کریں گے جبکہ دوسری جانب ایم پی اے میڈم عابدہ راجہ سے مری پریس کلب کے ممبران اور عہدے داران کی ملاقات انھوں نے بے گناہ غریب مزدور لوگوں کو پولیس گردی کی تمام تفصیلات سے آگاہ کیا انھوں نے کہا کہ وہ کسی صورت کسی غریب اور بے گناہ کو پابند سلاسل نہیں ہونے دیں گیں وہ اس مسلہ کو آئی جی پنجاب اور وزیر اعلی پنجاب کو بھی تمام معملات سے آگاہ کرنے کا یقین دلوایا اور مری پولیس کو حکم دیا کہ اصل منشیات فروش دو دن کے اندر گرفتار کریں بے گناہ لوگوں کو گرفتار کر کے خانہ پوری مت کریں اس کے بارے میں تحقیقات بھی ہوں گیں اور ملوث لوگوں کے خلاف سخت ایکشن ہو گا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں