awara-dog 86

آوارہ کتوں کی مری شہر اور گردونواح کے علاقوں میں بھرمار

مری آوارہ کتوں کی مری شہر اور گردونواح کے علاقوں میں بھرمار موٹر ایجنسی،کارٹ روڈ،لوئر جھیکاگلی روڈ،صدیق چوک لوئر بازار،محلہ شوالہ،کشمیر پوائنٹ سمیت دیگر علاقوں میں آوارہ کتے ٹولیوں کی شکل میں سڑکوں پر پھرتے نظر آتے ہیں گذشتہ دنوں شہر کے مختلف علاقوں میں ان آوارہ کتوں نے چارسے زائد افراد کو شدید زخمی کردیا جبکہ غریب لوگوں کے پالتوجانور جن میں بکریاں اورمرغیاں شامل ہیں کو ہلاک کردیا ہے،کتوں کے کاٹے جانے والے زخمیوں کو جب تحصیل ہیڈکواٹر ہسپتال مری پہنچایا گیا تو ہسپتال انتظامیہ نے انٹی ریبیز ویکسین نہ ہونے کاکہہ کر لواحقین کو شدید پریشان کردیا لواحقین کاکہنا ہے کہ موجودہ کوروناوائرس کی سنگین صورتحال اور غریب ہونے کے باعث وہ مریض کو دوسرے شہرمیں لے جانے کی سکت نہیں رکھتے ہیں ایسے میں مری کے اکلوتے تحصیل ہیڈکواٹر ہسپتال میں کتے کے کاٹنے کی ویکسین کانہ ہونا لاکھوں کی آبادی کیلئے انتہائی پریشان کن ہے اہلیان علاقہ نے ممبران اسمبلی،کمشنر،ڈپٹی کمشنر راولپنڈی،محکمہ صحت راولپنڈی کے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ مری میں فوری طور پر آوارہ کتوں کو تلف کرنے کی مہم شروع کی جائے اور ٹی ایچ کیو ہسپتال مری میں انٹی ریبیز ویکسین فراہم کی جائے تاکہ یہاں کے غریب لوگ دوسرے شہروں جانے کی زحمت سے بچ سکیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں