GPO murree 18

مری میں طویل لاک ڈاؤن سے عوام کی مشکلات میں اضافہ

مری میں طویل لاک ڈاؤن سے عوام کی مشکلات میں اضافہ خصوصی طور پر سفید پوش،دیہاڑی دار اور مزدور طبقے بری طرح متاثر ہورہے ہیں جبکہ مری کی ہوٹل انڈسٹری جس سے لاکھوں افراد کا روزگار وابستہ ہے لاک ڈاؤن اور سیاحوں کے مری داخلے پر پابندی سے بری طرح متاثر ہوئے ہیں اور انکی نوبت فاقہ کشی تک پہنچ چکی ہے مری کی معیشت کا مکمل دارومدار سیاحت پر اورہوٹل انڈسٹری پر ہے اور ہوٹلوں کاکاروبار سیاحوں کی آمدسے ہی ہے چل سکتا ہے آج لاکھوں لوگ جن میں ہوٹل مالکان،ریسٹورنٹس میں کام کرنے والے بہرے،خانسامے،ہوٹل گائیڈز،ٹیکسی مالکان اور ڈرائیورز،ریڑھی بان،مزدور سمیت تمام طبقے بری طرح معاشی مسائل سے دوچار ہوچکے ہیں ایک سروے کے مطابق مذکورہ طبقات مطالبہ کیا ہے کہ ملکہ کوہسار مری میں لاک ڈاؤن کو مکمل ختم کرکے سیاحوں پر مری آنے کی پابندی کو فوری ختم کیاجائے تاکہ وہ اپنے بال بچوں کو رزق حلا ل کماکر دے سکیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں