پرائیویٹ تعلیمی 15

تحصیل مری اور کوٹلی ستیاں کے پرائیویٹ تعلیمی اداروں کے لئے وزیرِ اعظم خصوصی پیکج کا اعلان کریں

مری تحصیل مری اور کوٹلی ستیاں کے پرائیویٹ تعلیمی اداروں کے لئے وزیرِ اعظم خصوصی پیکج کا اعلان کریں گزشتہ روز مری میں مری اور کوٹلی ستیاں کے پرائیویٹ سکولوں کے سربراہان کے اجلاس میں متفقہ فیصلہ،مذکورہ تحصیلوں کے تعلیمی ادارے دسمبر سے تعطیلات موسمِ سرما کی وجہ سے مارچ تک بند تھے۔اور اس کے بعد نئے تعلیمی سال کے آغاز پر کورونا وائرس کی وجہ سے سکولوں کونہ کھولنے کے احکامات جاری کر دئے گئے تھے پانچ ماہ سے سکول مالکان بحران کا شکار ہیں،یہ پہاڑی علاقہ اور یہاں غریب لوگ بستے ہیں، موجودہ صورتحال میں ایسے دیہاڑی دار غریب طبقے سے جو دسمبر سے تا حال بیروزگاری کا شکار ہے جس کے گھر میں راشن نہیں ہے اُس سے فیس طلب کرنا جلتی پر تیل چھڑکنے کے برابر ہے۔ خطے میں قائم 95فیصد تعلیمی ادارے نہایت ہی کم فیس میں فلاحی جذبے سے غریب عوام کے بچوں کو بنیادی تعلیمی سہولیات فراہم کر رہے ہیں ان خیالات کا اظہارشاکر حسین،لیاقت عباسی، محمد بشیر،ثاقب عباسی، انیس الرحمان عباسی، قمر عباسی، وحید عباسی اور دیگر نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیاانہوں نے کہا ہے کہ ہمارے اِن چھوٹے دیہی اداروں سے تعلیمِ یافتہ باکردار،باصلاحیت، محبِ وطن اور ایماندارطلبہ الحمداللہ ہر شعبے میں ملکی تعمیرو ترقی میں کلیدی کردار ادا کر رہے ہیں ملک بھر میں اس وقت سب سے زیادہ جو متاثرہ افراد ہیں وہ انہی چھوٹے چھوٹے تعلیمی اداروں کے سربراہان ہیں جنہیں نظرانداز کیا گیاجو عرصہ پانچ ماہ سے اساتذہ کی تنخواہوں،بلڈنگ کرایہ اور دیگر بلز کی ادائیگیوں کے سلسلے میں شدید پریشانی اور مسائل کا شکار ہیں اورجو اپنی عزت اور سفید پوشی کی وجہ سے احتجاج بھی نہیں کرسکتے دونوں تحصیلوں کے سکولز سربراہان نے وزیرِاعلیٰ پنجاب باالخصوص وزیرِ اعظم پاکستان سے اپیل کی ہے کہ اربوں روپے کے پیکج میں تحصیل مری اور کوٹلی ستیاں کے ان چھوٹے نجی تعلیمی اداروں کے لئے مشکل کی اس گھڑی میں خصوصی پیکج کا اعلان کریں، اجلاس میں محمد ابرار،محمد اشتیاق،اسداللہ،شکیل الرحمن،محمدطارق، شاھد محمود، نصیر،اعجاز قریشی،وقاص عباسی،سانول خان،شکیل احمد، مظہر،امجد،عنایت عباسی، محمد امتیازاوردیگر شامل تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں