money-pakistani-rupes- 149

بانسرہ گلی تا جاواپٹھلی روڈ جو کروڑوں روپے کی رقم سے تعمیرکی گئی کا ٹھیکیدارنالیاں اور پلیاں تعمیر کیے بغیر ہی رفوچکر

مری بانسرہ گلی تا جاواپٹھلی روڈ جو کروڑوں روپے کی رقم سے تعمیرکی گئی کا ٹھیکیدارنالیاں اور پلیاں تعمیر کیے بغیر ہی رفوچکرہوگیاہے جس کی وجہ سے کروڑوں روپے خرچ کرکے تعمیرکی گئی سڑک کوپانی لگنے سے شدید نقصان پہنچ رہاہے اس بارے میں اہلیان علاقہ نے متعدد بار محکمہ ہائی وے سمیت دیگر زمہ داران کومطلع کیالیکن ان کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگ رہی اب بھی اگر سڑک کی نالی اورپل تعمیر کردیے جائیں توسڑک کونقصان سے بچایاجاسکتاہے ان خیالات کااظہار جاواپٹھلی اور کیاری کے متعدد افراد نے میڈیا سے رابطہ کرکے بتایا،انہوں نے کہاکہ ٹھیکیدارنے وعدہ کیاتھاکہ کنکریٹ کرنے کے بعد وہ نالی اور پلیوں کی تعمیر یقینی بنائے گا لیکن تعمیر کی گئی سڑک کا بل وصول کرتے ہی وہ نودوگیارہ ہوگیاجس کی وجہ سے بارش کاپانی سڑک کوشدید نقصان پہنچارہاہے اگر یہ سلسلہ اسی طرح جاری رہاتو کروڑوں روپے کی لاگت سے تعمیرہونے والی سڑک کچھ ہی عرصہ میں کھنڈرات کامنظر پیش کررہی ہوگی،اہلیان علاقہ کاکہناہے کہ محکمہ ہائی وے مری بھی کرپشن کاگڑھ بن گیاہے جو ٹھیکیدارسے اپنے حصے کی وصولی کے بعدساری صورتحال سے آگاہ ہونے کے باوجود خاموش تماشائی کاکردار ادا کررہاہے اوراس معاملے کانوٹس نہیں لے رہا،انہوں نے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیاہے کہ مزکورہ سڑک کے تعمیر کے لیے سرکاری خزانے سے جاری کیے گئے کروڑوں روپوں کی تحقیقات کی جائیں اور ٹھیکیدارکے خلاف کاروائی کی جائے ورنہ وہ احتجاج پر مجبورہوں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں