مری ایم ایل آر 133

ایم ایل آر کٹانے کیلئے مری سے کوٹلی ستیاں ہسپتال میں جانا انتہائی غیر مناسب اور عوام کے ساتھ زیادتی ہے

مری اسد اقبال عباسی ایڈووکیٹ نے کہا ہے کہ مری بار ایسوسی ایشن اور مری کے وکلاء میں شدید تشویش پائی جارہی ہے کہ ایم ایل آر کٹانے کیلئے کوٹلی ستیاں ہسپتال میں جانا انتہائی غیر مناسب اور عوام کے ساتھ زیادتی ہے جس سے اہلیان مری کی مشکلات میں اضافہ ہورہا ہے اس سے قبل تحصیل ہیڈکواٹر ہسپتال مری میں ہی ایم ایل آر ہوتی تھی اور بعض کیسوں میں مریض کو راولپنڈی جنرل ہسپتال بھیجاجاتا تھا جبکہ اب ایم ایل آر کیلئے کوٹلی ستیاں جانا پڑتا ہے جس کے باعث مریض اور انکے لواحقین شدید مشکلات سے دوچار ہوتے ہیں ایک تو انتہائی پسماندہ علاقہ اور ٹوٹی پھوٹی سڑکوں پر مریض اور پولیس کو ساتھ لیکرجانے سے مریض کی کوٹلی ستیاںہسپتال پہنچنے تک حالت مزید خراب ہوجاتی ہے تحصیل بھر کے لوگوں کیلئے مری کے ہسپتال میں اور راولپنڈی کے ہسپتال میں پہنچنا انتہائی آسان ہے لیکن اب کوٹلی ستیاں ہسپتال میں ایم ایل آر کیلئے جانا مریضوں اور انکے لواحقین کیلئے بہت مشکل ہوگیا ہے ، مری بار ایسوسی ایشن نے مطالبہ کیا ہے تحصیل مری کے عوام کو ایم ایل آر بنوانے کی سہولت تحصیل ہیڈکواٹر ہسپتال مری میں سہولت فراہم کی جائے۔