133

ملکہ کوہسار مری میں خود سا ختہ مہنگائی نے عوام کی کمر توڑ دیں

مری (خمیراہ صدیق)مری میں خود ساختہ مہنگائی نے عوام کی چیخیں نکال دیں ہر چیز میں مہنگی انتظامیہ خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے گوشت دالیں صابن سبزیاں آسمان سے باتیں کرنے لگی غریب عوام کی پہنچ سے دور تبدیلی سرکار کے نعرے نعرے ہی رہے۔ہر چیز ہوا سے باتیں کرنے لگی اور کوئی پوچھنے والا نہیں تفصیلات کے مطابق مری میں مہنگائی نے غریب لوگوں کا جینا دوبر کر دیا ہر دوکاندار اپنے من مانے ریٹ تبدیلی سرکارکے نام پر لگا کرعوام کو لوٹا جایا جا رہا ہے۔انتظامیہ خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے کوئی پوچھنے والا نہیں ہے اتنی مہنگائی ہونے کی وجہ سے غریب عوام ایک وقت کا کھانا کھانے سے مجبور ہو کر رگئے ہے کیونکہ موجودہ حکومت کا نام لے کر عوام کو لوٹا جاتا ہے اور اس کو بدنام کیا جا رہا ہے۔پرائس کمیٹیاں کو فال بنایا جائے تا کہ عوام کو ریلیف مل سکے مری میں یوٹلیلٹی سٹورز غریب عوام کے لیے واحد سہارا تھا جہاں سے ریلیف ختم کر دیا گیا ہے اور تما م یوٹلیٹی سٹور خالی پڑے ہیں ضرورت اس امر کی ہے کہ انتظامیہ پرائس کنٹرول کمیٹیوں کو فال بنائے تا کہ غریب عوام کو ریلیف مل سکے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں