Raja Irfan Abbasi 89

مری لاک ڈاؤن سے دیہاڑی دار،مزدور اور روزانہ کی اجرت پر کام کرنے والوں کے گھروں کے چولہے ٹھنڈے پڑگئے راجہ عرفان عباسی

ملکہ کوہسارمری میں سب سے زیادہ لاک ڈاؤن کے اثرات مرتب ہوئے ہیں کورونا وائرس کے حوالے سے حکومتی ایس اوپیز پر بھی سب سے زیادہ عمل مری کے کاروباری حلقوں اور عوام نے ہی کیا ہے یہاں کوئی بھی انڈسٹری نہ ہونے سے لاکھوں غریب لوگوں کے روزگار کا انحصار مکمل طور پر ہوٹل وریسٹورنٹس انڈسٹری ہے پر ہی ہے حالیہ لاک ڈاؤن سے دیہاڑی دار،مزدور اور روزانہ کی اجرت پر کام کرنے والوں کے گھروں کے چولہے ٹھنڈے پڑگئے ہیں ملک بھر میں کاروباری سرگرمیاں بحال کردی گئیں جبکہ ملکہ کوہسار مری میں تاحال ہوٹل و ریسٹورنٹس کو نہیں کھولا گیا جس سے لاکھوں افراد بیروزگارہوگئے ہیں حکومت مری کے غریب لوگوں کی حالت زار کو دیکھتے ہوئے مری کے ہوٹلوں اور ریسٹورنٹس کو فوری طور پر لاک ڈاؤن سے استثنیٰ دیاجائے ہم پہلے کی طرح حکومتی ایس اوپیز پر مکمل عمل کرینگے ان خیالات کا اظہارمری کی معروف کاروباری،سیاسی،سماجی شخصیت مری پریس کلب کے جنرل سیکرٹری وچیئرمین ہوٹل ایسوسی ایشن مری رجسٹرڈ راجہ عرفان عباسی،سابق صدرانجمن تاجران مری،مری یونین آف جرنلسٹس کے صدر سیدتاج حسین بخاری،مری الیکٹرانک میڈیا کے جنرل سیکرٹری سجاد عباسی نے مری میڈیا کے سینئراراکین،مری کی کاروباری وسماجی شخصیات اوردیگر رہنماؤں سے ایک ہنگامی مشاورتی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ اس سلسلے میں آج مورخہ 18 مئی دن 2 بجے طباق ہوٹل سے مشاورت کے بعد ایک بڑے وفد کے ہمراہ اسسٹنٹ کمشنر مری محمداقبال سنگھیڑا سے ملاقات کرکے انکو زمینی حقائق اور عوام کی حالت زار سے آگاہ کیاجائیگا اوران سے درخواست کی جائیگی کہ وہ اس سلسلے میں اپنا کردار اداکرتے ہوئے اس اہم مسئلہ کواعلیٰ حکام تک پہنچاکر موجودہ گھمبیر صورتحال سے آگاہ کرکے ریلیف دلوائیں انہوں نے کہا کہ اسکے بعددیگر آپشنز پر غورکیاجائیگا۔