Drugs 71

مری بھر میں منشیات فروش کھلے عام چرس۔پوڈر۔آئس کا کاروبار کرنے لگے

مری بھر میں منشیات فروش کھلے عام چرس۔پوڈر۔آئس کا کاروبار کرنے لگے۔ ہر 10 میں سے 7 افراد منشیات استعمال کرنے لگے۔سکول کالج جانے والے بچے بھی منشیات فروشوں کے شکار بن گئے۔پولیس چوکیوں میں موجود عملہ سب جانتے ہوۓ بھی منشیات فروشوں کی محفوظ پناہ گائیں بننے سے نہ روک سکے۔بازار اور دربار بھی منشیات فروشوں سے محفوظ نہ رہے۔تحصیل بھر کی عوام بچوں کی بڑی تعداد منشیات فرشوں کے ہاتھ لگنے پر سراپا احتجاج۔پولیس تگڑی عوامی شکایات پر پکڑے جانے والے منشیات فروشوں پر انتہائی کم مقدار میں منشیات ڈال کر ان کی عدالتوں سے رہائی کی راہیں ہموار کرتی ہے۔پولیس چوکیوں میں منشیات فروشوں کے گہرے مراسم ہونے کے اشارے ملنے لگے۔مری کی عوام سیاست دانوں کو منشیات فروشوں کی سرپرست قرار دینے لگی۔یونین کونسل گھوڑا گلی تریٹ کے تاجران۔بزرگ۔نوجوان۔اساتذہ نے لورہ روڈ۔کمپنی باغ۔ساملی میں منشیات فروشی کے پھیلتے ہوۓکاروبار پر کھل کر اپنا اپنا اظہار خیال کرتے ہوۓ کیا۔عوام الناس نے ارباب اختیار سے مطالبہ کیا کہ پولیس چاہے تو منشیات فروشوں کے خلاف موثر کاروائیاں کر کہ جہاں منشیات فروشی کو ختم کر سکتی ہے وہائیں پر ان علاقوں کے بچوں اور نوجوانوں کو بھی اس لعنت سے بچایا جا سکتا ہے۔ذرائع کے مطابق مری کا نہ تو کوئی بازار اور نہ ہی کوئی دربار منشیات فروشوں سے محفوظ نہیں ہے۔اور بیروزگاری سے تنگ افراد کی اکثریت منشیات فروشوں کی آلہ کار بن رہی ہے۔