A.P.S. confrence All parties 36

ڈگری کالجز کی حیثیت ختم کے خلاف مری میں آل پارٹیز نے تحریک کا آغاز

مری ڈگری کالجز کی حیثیت ختم کے خلاف مری میں آل پارٹیز نے تحریک کا آغاز کردیا،آل پارٹیز میں شامل جماعتیں پاکستان مسلم لیگ ن،پاکستان پیپلز پارٹی،جمعیت علماء اسلام،جماعت اسلامی،مسلم لیگ ق اورمزدور کسان پارٹی شامل ہیں کی آل پارٹی کانفرنس ایک نجی ہوٹل میں منعقد ہوئی جس میں مقررین ذوالفقارامین ایڈووکیٹ،اسد اقبال عباسی ایڈووکیٹ،راجہ عتیق سرور،حافظ عثمان عباسی،راجہ دفتر عباسی،محمدنذیرعباسی ایڈووکیٹ،قاری سیف اللہ سیفی،مری بار کے صدرراجہ عبدالرحمان ایڈووکیٹ،جنرل سیکرٹری فرحان نور عباسی ایڈووکیٹ،ڈاکٹر کامران ستی،شفیق ستی،مسعود بٹ،بلال ایڈووکیٹ نے آل پارٹی کانفرنس سے خطاب کیاانہوں نے کہا کہ ہم کسی صورت کالجز کی حیثیت کو ختم نہیں ہونے دینگے اور ان کو کوہسار یونیورسٹی میں ضم کرنا مری کے طلبہ اور عوام کے ساتھ بہت بڑی زیادتی ہوگی جو ہمیں کسی صورت قابل قبول نہیں ہے انہوں نے کہا کہ کالجز ضم ہو چکے ہیں ان کو واپس کیسے لانا ہے آگے بچوں کے داخلے ہونگے اگر یہی حالات رہے تو بچوں کا مستقبل تبا ہ ہونے کا خدشہ ہے اور بی اے بی ایس پروگرام ایک مذاق ہے اور ساڑھے تین لاکھ فیس ہوگی جو غریب والدین کسی صورت اد انہیں کرسکتے انہوں نے کہا سفید پوش طبقہ کو مشکل میں ڈال دیا گیاہے یورپ یکساں تعلیمی نظام سے آج تعلیم کے شعبہ میں سب سے آگے اور ہم سب سے پیچھے ہیں کانفرنس میں فیصلہ کیا گیا کہ فوری اس پر عدالت میں رٹ دائر کی جائے تاکہ اس معاملہ کو روکا جاسکے اور طلباء وطالبات کو ریلیف مل سکے غریب طلباء کو تعلیم سے محروم نہیں کرنے دیاجائیگا سیاسی قائدین نے کہا کہ ہمیں ایک دوسرے کے لیے نہیں بلکہ میرٹ پر اپنے ووٹ کا استعمال کرنا چائیے تاکہ ایسے نااہل لوگ منتخب نہ ہوں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں