Municipal elections 21

حکمران جماعت کی پریشانی میں کافی اضافہ،،،

مری بلدیاتی انتخاب کی آمد حکمران جماعت کے پاس مری میں کئی کئی امیدوار ۔قرعہ کس کس کے نام نکلے گا منتخب قیادت کی پریشانی میں اضافہ ہو سکتا ہے۔تنظیمی عہداران کیا الیکشن میں حصہ لے پائیں گے کارکنان کا سوال۔وعدے پورے نہ ہوۓ تو کڑاکے بج سکتے ہیں۔یاد رہے کہ مری کی پندرہ یونین کونسلز میں بلدیاتی انتخابات میں حکمران جماعت کے ارباب اختیار نے بیک وقت متعدد کارکنان کی حمایت حاصل کرتے وقت ان سے بلدیات میں سپورٹ کے وعدے اور باتیں کر رکھی ہیں جس پر تمام لوگ اپنے آپ کو ۔منتخب قیادت کو اپنے قریب تصور کرتے ہیں جس سے ٹکٹ کی تقسیم کے وقت حکمران جماعت کی پریشانی میں کافی اضافہ ہو سکتا ہے ایک وارڈ کے کونسلر سے لیکر تحصیل تک کئی افراد قومی انتخاب کے دوران حاصل ہونے والی قربت پر ابھی تک اس آس امید پر ہیں کہ منتخب قیادت ان کے ساتھ ہے جبکہ کئی کارکن یہ سمھجتے ہیں کہ پارٹی عہدے دار الیکشن میں ٹکٹ نہیں لے سکتے جو ایک بہت بڑی غلط فہمی ہے ٹکٹ نہ منلے پر پرانے کھلاڑی آزاد حثیت سے میدان بلدیات میں قدم رکھ کر حکمران جماعت کے لیئے باعث شرمندگی بن سکتے ہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں