Water prices rise 23

پانی کی قیمتوں میں 100 فیصد اضافہ کرنے کا خود کش حملہ،،،

مری میونسپل کمیٹی مری نے پانی کے صارفین پر پانی کی قیمتوں میں 100 فیصد اضافہ کرنے کا خود کش حملہ،دودن بعد شہریوں کو پانی انتہائی کم مقدار میں پانی سپلائی کیاجاتا ہے اور بھاری بھرکم بل بیج دئیے جاتے ہیں پہلے ہی عوام کوروناوائرس اور لاک ڈاؤن کے باعث شدید معاشی مشکلات سے دوچار ہیں ایسے میں عوام پر اتنا بھاری بوجھ ڈالنا سمجھ سے بالا تر ہے آج مورخہ 20 اگست کو دن بارہ بجے میونسپل کمیٹی میں شہریوں کی جانب سے پانی کے بلوں میں اضافے کیخلاف اعتراضات سنے جائینگے شہری اس موقع پر کثیر تعداد میں پہنچ کر اپنے تحفظات بیان کریں ان خیالات کاا ظہار سابق نائب ناظم مری سٹی مرزا سہیل بیگ نے شہریوں کو اپنے ایک پیغام میں دیا انہوں نے بتایاکہ 2014 میں دوروپے سے 5 روپے فی 100 لیٹر کئے گئے تھے جبکہ اب میونسپل انتظامیہ اب ان ریٹس کو مزید ڈبل کرنا چاہتی ہے جبکہ پانی کی سپلائی نہ ہونے کے برابر ہے انہوں نے کہا کہ پانی کے بل جمع کرانے کا طریقہ کار بھی انتہائی مشکل بنادیاگیا ہے پہلے بل بلدیہ کے دفتر میں جمع کئے جاتے تھے جس سے صارفین کو سہولت حاصل تھی اب دفتر سے بل بنواکر شہر سے دور بنک میں بل جمع کروائے جاتے ہیں جس سے عوام کو شدید مشکلات کا سامنا ہے میونسپل کمیٹی انتظامیہ صارفین کی مشکلات کو دیکھتے ہوئے پانی کے بلوں میں اضافے کے فیصلے کو واپس لے اور پہلے کی طرح بلدیہ کے دفتر میں جمع کروائے جانے کے احکامات جاری کرے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں