28

گھر کے فریزر سے کتے، بلی اور سانپ سمیت 183 جانور مردہ حالت میں برآمد، شہری گرفتار

ایریزونا کے 43 سالہ مائیکل پیٹرک ٹورلینڈ نے اعتراف کیا ہے کہ اس نے کچھ جانوروں کو زندہ حالت میں ہی فریز کردیا تھا—فوٹو: بی بی سی 

امریکا میں گھر کے فریزر سے کتے ، بلی اور سانپ سمیت 183 جانور مردہ حالت میں برآمد ہوئے۔

غیر ملکی خبررساں ایجنسی کے مطابق امریکی ریاست ایریزونا میں ایک شخص کو گرفتار کیا گیا ہے جس کے گھر کے فریزر سے کتے ، بلی سانپ اور دیگر جانور برآمد ہوئے۔

پولیس حکام کے مطابق ایریزونا کے 43 سالہ مائیکل پیٹرک ٹورلینڈ نے اعتراف کیا  ہے کہ اس نے کچھ جانوروں کو زندہ حالت میں ہی فریز کردیا تھا جس کے بعد اس شخص پر جانوروں پر ظلم کے 94 الزامات عائد کیے گئے ہیں۔

رپورٹس کے مطابق پیٹرک کی گرفتاری پولیس کو خاتون شہری کی طرف سے  شکایت درج کروانے کے بعد عمل میں آئی، جس نے پولیس کو بتایا کہ اس نے سانپوں کو پالنے کے لیے اس 43 سالہ شخص کے پاس چھوڑا لیکن چند مہینوں کے بعد وہ  غائب ہوگئے ۔

خاتون نے پولیس کو بتایا کہ  پیٹرک اور اس کی اہلیہ اپنے گھر  سے کہیں دوسری جگہ  چلے گئے تو گھر کے مالک نے ان سے رابطہ کیا۔

خاتون نے پولیس کو مزید بتایا کہ جب مالک اپارٹمنٹ کی صفائی کرنے آیا تو گیراج میں مردہ جانوروں سے بھرا ایک فریزر ملا جس میں جمے ہوئے جانوروں میں کتے، کچھوے، چھپکلی، پرندے، سانپ، چوہے، سانپ اور خرگوش پائے گئے۔

رپورٹس کے مطابق10 دن بعد جب پولیس کو اطلاع ملی کہ پیٹرک گھر واپس آگیا تو سکیورٹی اہلکاروں نے اسے گرفتار کیا تاہم بیوی کی تلاش اب بھی جاری ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ پیٹرک جانوروں کو فریز کیوں کرتا تھا تاحال اس حوالے سے کچھ واضح نہیں ہوسکا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں