29

ایم ایل اے کی مہمان بن کر اس اسکول آمد جہاں والدہ صفائی کا کام کرتی ہیں

لبھ سنگھ اوگوک نے ایک سرکاری اسکول میں بحیثیت مہمان خصوصی شرکت کی جہاں ان کی والدہ گزشتہ 25 سال سے جھاڑو لگا رہی ہیں۔—فوٹو: بھارتی میڈیا

بچوں کی تعلیم اور  ان کو  زندگی میں بہترین مقام پر  پہنچانے کیلئے والدین ہمیشہ قربانیاں دیتے ہیں اور جب یہی بچے پڑھ لکھ کر معاشرے میں کسی اعلیٰ عہدے پر فائز ہوتے ہیں تو  ماں باپ کیلئے  باعث فخر  ہوتا ہے۔

ایک ایسا ہی واقعہ بھارت میں پیش آیا جہاں بھارتی پنجاب کے رکن اسمبلی نے اس اسکول میں مہمان خصوصی شرکت کی جہاں ان کی والدہ صفائی ستھرائی کا کام کرتی ہیں۔

 بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق پنجاب کے ممبر قانون ساز اسمبلی (ایم ایل اے) لبھ سنگھ اوگوک نے ایک سرکاری اسکول میں بحیثیت مہمان خصوصی  شرکت کی جہاں ان کی والدہ  گزشتہ 25 سال سے  جھاڑو لگانے کا کام کر رہی ہیں۔

اس موقع پر ایم ایل اے کی والدہ کا کہنا تھا کہ مجھے خوشی اور فخر ہے کہ میرا بیٹا رکن اسمبلی بن گیا، لبھ خود بھی اسی اسکول میں پڑھتے تھے۔

لبھ سنگھ کی والدہ کا کہنا ہے کہ ہم نے ہمیشہ پیسہ کمانے کے لیے سخت محنت کی ہے اور میرے بیٹے کے اعلیٰ عہدے پر فائز ہونے کے باوجود میں اسکول میں اپنا فرض ادا کرتی رہوں گی۔

بھارتی میڈیا کے مطابق  عام آدمی پارٹی (اے اے پی)  کے رہنما لبھ سنگھ نے حال ہی میں پنجاب کے سابق وزیر اعلیٰ چرنجیت سنگھ کو تقریباً 37 ہزار  ووٹوں سے شکست دی۔

 لبھ سنگھ نے 2013 میں عام آدمی  پارٹی میں شامل ہونے کے بعد پارٹی میں کافی جلدی نمایاں جگہ حاصل کی، سیاست میں آنے سے پہلے وہ موبائل کی مرمت کے ایک چھوٹے سے اسٹور میں کام کرتے تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں