Kalrasidan Land Record Center 68

کلرسیداں آراضی ریکارڈ سنٹر میں عملے کی شدید کمی

کلرسیداں (عبدالعزیزپاشا )کلرسیداں آراضی ریکارڈ سنٹر میں عملے کی شدید کمی سائلین پریشان کلرسیداں اراضی ریکارڈ سنٹر میں 14سیٹوں پر کام کر نے والوں میں سے 4 آفیسر کو تبدیل کر دیا جبکہ 2آفیسر کو رنگ روڈ پر عارضی طور پر لگا دیا گیا ہے جبکہ اس وقت کلرسیداں میں صرف2آفیسر اپنے فرائض سر انجام دے رہے ہیں اراضی ریکارڈ سنٹر کلرسیداں میں کمپیوٹرائزیشن کیلئے صرف دو آفیسر ہی چل رہے ہیںپنجاب میں دیہی اراضی ریکارڈ کی کمپیوٹرائزیشن، ہر تحصیل میں اراضی ریکارڈ سنٹر کے قیام اور کمپیوٹرائزڈ لینڈ ریکارڈ سروسز کی فراہمی کے نئے نظام کو برقرار رکھنے کیلئے پنجاب لینڈ ریکارڈز اتھارٹی ایکٹ 2017 کے تحت پنجاب لینڈ ریکارڈ ز اتھارٹی کا قیام عمل میں لا یا گیا۔ جسکا مقصد ایک جانب تو اراضی ریکارڈ سنٹر کے انتظامی معاملات کو چلانا تو دوسری جانب اس نظام کو عوامی سہولت اور بدلتے دور کے جدید تقاضوں سے ہم آہنگ کرتے رہنا ہے تاکہ بیشتر محکموں اور انتظامی اداروں کے مابین منتشر نظام کو بین الاقوامی معیار کے مطابق جدید خطوط پر ایک مربوط و متحد لینڈ ایڈمنسٹریشن سسٹم میں ڈھالا جا سکے۔اتھارٹی کے قیام سے اب تک اراضی ریکارڈ خدمات کے حوالے سے عوامی سہولت کیلئے بیشتر اقدامات کیے گئے ہیں اسی طرح اراضی ریکارڈ خدمات کی دہلیزتک فراہمی کیلئے عوامی سہولت کا یہ سفر جاری و ساری ہے لیکن کلرسیداں میں سٹاف کی کمی تاحال پوری نہ ہو سکی عوامی و سماجی حلقوں نے وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار اور کمشنر راولپنڈی اور ڈپٹی کمشنر راولپنڈی فوری طور پر نوٹس لے کر سٹاف کی کمی کو پورا کریں۔