Long lines at private banks 11

کہوٹہ انتظا میہ نجی بینکو ں کے با ہر لگی لمبی لا ئینوں

کہو ٹہ (ملک محمو د اختر سے)کہوٹہ انتظا میہ نجی بینکو ں کے با ہر لگی لمبی لا ئینوں پر بھی کرونا ایس اؤ پی پر عمل درآمد کر وائے،اگر ایک دو کاندا ر ایک فٹ اپنا سا مان با ہر رکھ دے، یا بغیر ما سک کسی گاہک کو سامان دے تو انتظا میہ قا نو ن نا فذ کر نے پہنچ جا تی ہے، جبکہ کہوٹہ کے متعدد نجی بینکو ں کے با ہر عوا م کی بڑ ی بڑی لا ئینیں سڑک کے در میا ن تک پہنچی ہو تی ہیں چھ فٹ فا صلے کے بجائے کھڑے عوا م میں تل رکھنے کی جگہ تک نہیں ہوتی،کہوٹہ انتظا میہ کی اس صو رت حال پر خا مو شی ایک سوالیہ نشا ن؟ہے، ڈی سی اؤ را ولپنڈی فو ری نو ٹس لیکر کہوٹہ انتظا میہ کو نجی بینکو ں کے با ہر کرو نا وائر س ایس اؤ پیز پر عمل در آمد کرنے کے احکا ما ت صا در فر ما ئیں تا کہ بڑے خطر ے سے عوا م کو بچا یا جائے۔ ان خیا لات کا اظہا ر گز شتہ رو ز صد ر انجمن تا جران تحصیل کہو ٹہ را جہ امتیا ز عا لم، سابق صد ر با ر ایسو سی ایشن کہوٹہ را جہ افشا ر محبو ب ایڈو کیٹ، ممتا ز قانون دان راجہ اختشا م ایڈو کیٹ نے انجمن تا جران کہوٹہ کے مر کزی دفتر میں نمائندہ سے با ت چیت کرتے ہوئے کیا انہو ں کا کہنا تھا کہ اگر کو ئی دوکاندا ر بغیر ماسک کسی فرد کو کو ئی چیز دے دیں تو انتظا میہ کئی گا ڑیو ں پر مشتمل قافلے سمیت اسکے خلا ف کاروا ئی کرنے پہنچ جاتی ہے مگر کہوٹہ کے نجی بنکوں کے با ہر سر عا م کرو نا وائرس ایس اؤ پیز کی خلا ف ورزیا ں کی جا رہی ہیں، لمبی لمبی لا ئیں کسی بڑے خطرے کی گھنٹی بجا رہی ہیں، اگر بروقت ایکشن نہ لیا گیا تو کہوٹہ سے مزید کیس رپو رٹ ہونے کا خد شہ ہے انہو ں نے ڈی سی اؤ را ولپنڈی سے فو ری نو ٹس لینے کا مطا لبہ کیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں