Building construction 19

غیر قانونی نقشہ جات بلڈنگ تعمیرات کا سلسلہ اخباری اشاعت کے باوجود نہ روک سکا،

کہوٹہ (ملک محمود اختر سے )کہوٹہ میو نسپل ایریا میں غیر قانونی نقشہ جات بلڈنگ تعمیرات کا سلسلہ اخباری اشاعت کے باوجود نہ روک سکا،بااثر اور سیاسی لو گ کمرشل ٹیکس ٹی ایم اے کے بلڈنگ ڈیپا رٹمنٹ سے ملکر بچانے کیلئے دوکانات کو گھریلو بیٹھکوں کی شکل میں بناکر تعمیرات کر رہے ہیں اور اسکے تعمیر ہونے کے کچھ دنوں بعد ان بیٹھکوں کو دوکانات شوکر کے شٹر گیٹ لگا دیتے ہیں ، سرعام ٹی ایم اے کہوٹہ کی ملی بھگت سے حکومتی ٹیکس چوری کیا جارہا ہے ، کوئی پوچھنے والا نہیں ، بار با ر عوامی شکایات ضلعی انتظا میہ بھی ٹس سے مس نہ ہے ، غریبوں پر قانون نافذ،مگر بااثر لو گوں پر کوئی قانون لا گو نہیں ،کہوٹہ شہر میں70فیصد مارکیٹوں اور بلڈنگ کے نقشوں کا کوئی ریکارڈ نہیں اور نہ ہی کسی نے بنوائے ،اس محکمے میں بھی ٹائو ٹوں کا قبضہ ہے ، مخصوص گروہ نے اس محکمے کے چند ڈیپا رٹمنٹ پر اپنی گرفت مضبو ط کر رکھی ہے ، جو شہری غلطی سے شکایت کردے تو اسکے خلاف ٹائو ٹ مافیا اور محکمہ اسکی زبان بند کرنے کیلئے اور حق و سچ کی آواز بلند کرنے والے صحافیوں کی قلم کو روکنے کیلئے طرح طرح کے ہتھکنڈے استعمال کرنے کیلئے سر جوڑ لیتے ہیں ، جسکی وجہ سے کوئی بھی شخص شکایت کرنے کی غلطی نہیں کرتا ، الیکٹر ک ڈیپارٹمنٹ میں سرعام کرپشن ہو رہی ہے ، سٹریٹ لائٹس کے بلب اور دیگر سلسلے میں محکمہ اور عوام کو پاگل بنایا جارہا ہے جو مجھے لکھنے اور بو لنے میں شر م محسوس ہو رہی ہے ، عوامی و سماجی حلقوں نے وزیر اعظم پاکستان عمران خان ، وزیر اعلی پنجاب عثمان بزدار سے اپیل کی ہے کہ خداراہ بڑے چوروں کے ساتھ ساتھ چھو ٹے چو روں کو بھی جو محکمہ میں نوکری کرنے کے باوجود حکو مت کو بد نام کرنے کی شازشیں کر رہے ہیں ، انکو بے نقاب کیا جائے ،ٹائو ٹ گیری اور غیر قانونی دھندوں ،حکومتی ٹیکس چوروں کے خلاف سخت کاروائی کی جائے ۔