dr sohail jhelum 27

اظہار۔ یکجہتی۔ ویلڈن ڈاکٹرز

 ڈاکٹر سہیل امتیاز خان

جہلم/افسوس صد افسوس آج کل کچھ شر پسند عناصر نے سوشل میڈیا پر ہمارے مسیحاؤں کے خلاف پراپیگنڈہ شروع کر رکھا ہے کہ اہسپتالوں میں ڈاکٹرز مریضوں کو انجکشن یعنی (ٹیکہ)لگا کر مار دیتے ہیں کرونا یا ویسے کسی بھی مرض میں مبتلا مریضوں کو اہسپتالوں میں نہ لے کر جائیں ڈاکٹرز ٹیکہ لگا کر مار دیتے ہیں خدا کے لیے اپنے ہیروز اور فرنٹ فیٹرز کا ساتھ دیں یہ تمام ڈاکٹرز اپنی جانوں پر کھیل کر ہمارے پیاروں کی جانیں بچانے میں شب وروز مصروف ہیں ذرا سوچیں کیا ان ڈاکٹرز میں ہمارے بچے ڈاکٹر نہیں ہیں کسی کا باپ کسی کا بیٹا کسی کی بہن کسی کی بیٹی ڈاکٹر ہے تو کیا آپ یہ سوچ سکتے ہیں ہمارے اپنے ہمیں کیسے موت دے سکتے ہیں خدارا ہوش کے ناخن لیں اور اپنے ان فرنٹ فیٹرز اور پیرامیڈیکل اسٹاف کے بازو بنے جن کو اس مشکل گھڑی میں ایک تو کرونا جیسے خاموش دشمن کے ساتھ لڑنا پڑ رہا ہے اور دوسری طرف ان سوشل میڈیا کے انجان دشمنوں سے مقابلہ کرنا پڑ رہا ہے اور ہمیں اس مصیبت کی گھڑی میں اپنے ڈاکٹرز سمیت ان تمام شعبہ جات میں کام کرنے والوں کا مثلآ پاک فوج، پنجاب پولیس، سول ڈیفنس ،وغیرہ جیسے شعبہ جات کا ساتھ دینا ہو گا تبی ہم ان اندرونی اور بیرونی دشمنوں کو شکست دے سکے گے شکریہ

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں