جہلم 78

دیگر شہروں کی طرح ضلع جہلم میں یوم سیاہ منایا گیا

جہلم /پنڈدادنخان(سلیمان شہباز،عدنان یونس )کشمیر پر بھارت کے 72سال سے غاصبانہ قبضے کے خلاف ملک بھر کے دیگر شہروں کی طرح ضلع جہلم میں یوم سیاہ منایا گیا۔ بھارت کے غیر قانونی تسلط کے خلاف پنڈدادنخان اور جہلم میں منعقدہ ریلیوں میں سرکاری افسران، سول سوسائٹی و دیگر شہری تنظیموں کے عمائدین نے بڑھ چڑھ کر حصہ لیا۔تفصیلات کے مطابق ڈپٹی کمشنر جہلم محمد سیف انور جپہ ،ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر جہلم کیپٹن (ر) سید حماد عابد اور پنڈدادنخان میں اسسٹنٹ کمشنر پنڈدادنخان احمد فراز کی زیر قیادت کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیلئے پنڈدادنخان اور جہلم میں ریلیاں نکالی گئیں، اس موقع پر ڈپٹی کمشنر سیف انور جپہ نے کہا کہ آج کے احتجاج کا مقصد کشمیر میں جاری بھارتی مظالم اور انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کو بے نقاب کرنا ہے 71سال قبل 27اکتوبر 1947 کو بھارت نے زبردستی کشمیر پر قبضہ کر کے ظلم و ستم کا بازار گرم کردیا تھا جو آج تک جاری ہے ۔ اس موقع پر شرکا نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ کشمیری عوام پر ظلم و ستم اور انسانیت سوز سلوک پر اقوام عالم کو آنکھیں کھولنا چاہئیں۔ ڈی سی سیف انور جپہ نے کہا ہے کہ پاکستان کشمیر میں بسنے والے مظلوم عوام کی سیاسی، سفارتی، اخلاقی مدد جاری رکھے گا۔ انکا کہنا تھا کہ کشمیری اپنے حق خود ارادیت کے حصول کی جدو جہد کے لئے تنہا نہیں ہیں۔ اب مقبوضہ کشمیرکو بھارتی تسلط سے آزادکروا کر دم لیں گے ۔جہلم سے نکلنے والی مرکزی ریلی میں مجموعی طور پر 2500کے قریب افراد نے شرکت کی جبکہ پنڈدادنخان ریلی میں بھی سینکڑوں افراد نے شرکت کی۔ اس موقع پر مختلف محکموں کے افسران، طلبہ و طالبات، سول سوسائٹی کے نمائندگان، صحافی برادر ی اور دیگر افراد نے شرکت کرتے ہوئے یوم سیاہ منایا ضلع جہلم میں پنجاب حکومت کے دیگر دفتر و تعلیمی اداروں میں بچوں نے کشمیر کے لئے یوم سیاہ منایا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں