public transportpublic transport 100

جہلم پبلک ٹرانسپورٹپر ناتجربہ کار اور بغیر لائسنس کے چھوٹی عمر کے ڈرائیوروں کی بھرمار

پنڈدادنخان(عدنان یونس)ضلع جہلم کی تحصیل پنڈدادنخان سے چلنے والی تمام پبلک ٹرانسپورٹپر ناتجربہ کار اور بغیر لائسنس کے چھوٹی عمر کے ڈرائیوروں کی بھرمار۔ایک سروے کے مطابق تقریباََ80فیصد پبلک ٹرانسپورٹ کی گاڑیوں کے پاس کاغذات نہ ہیں۔ آر ٹی سیکرٹری جہلم،آر ٹی سیکرٹری منڈی بہاوالدین سے نوٹس لینے کا مطالبہ تحصیل پنڈدانخان میں مسافروں کیساتھ غیر انسانی سلوک اور انسانیت کی تذلیل بڑے دھڑلے سے جاری ہے۔ فرنٹ سیٹ پر مردوں کا بیٹھنا سختی سے منع ہے نا تجربہ کار اور بغیر لائسنس کے چھوٹی عمر کے ڈرائیور روڈ پر ریس لگائے ہوئے دیکھائی دیتے ہیں جبکہ پھٹے والی سیٹ پر باپردہ عورتیں اور مرد اکٹھے بیٹھائے جاتے ہیں۔پنڈدادنخان جہلم روٹ، پنڈ دادنخان منڈی بہاوالدین روٹ اور پنڈدادنخان کھاریاں روٹ پر چلنے والی پبلک ٹرانسپورٹ جس میں ہائی ایس ٹیوٹاسرفہرست شامل ہیں ان میں اوور چارجنگ اور اوور لوڈنگ عروج پر ہے ان مسافر گاڑیوں ہائی ایس ٹیوٹا میں انسانوں کو بھیڑ بکریوں کی طرح ٹھونس کر انسانیت کی سرعام تذلیل کی جاتی ہے۔آر ٹی سیکرٹری جہلم، آرٹی سیکرٹری منڈی بہاوالدین صرف منتھلیاں دینے اور ائیر کنڈیشن کمروں تک محدود ہیں۔ اڈہ سے چودہ سواریوں کیساتھ نکلنے والی گاڑی راستے میں پنجاب پولیس اور پٹرولنگ پولیس چوکیوں کے ہونے کے باوجود قانون کی دھجیاں اْٹھانے والے ڈرائیوروں کے خلاف کاروائی عمل میں نہیں لائی جاتی ہے۔اگر یہ پولیس چوکیوں ان ہائی ایس ٹیوٹا کو صرف ایک دن یہ کام کرنے سے روکیں تو یہ کام رک سکتا ہے لیکن افسوس سد افسوس یہ ٹرانسپورٹر مافیا گھناونا دھندا جاری رکھے ہوئے ہے کیونکہ انتظامیہ میں چند کالی بھیڑیں موجود ہیں جو چند ٹکوں کی خاطرعوام کو ریلیف نہیں دلوانا چاہتی۔عوامی حلقوں، سماجی، رفاہی تنظیموں نے آر ٹی سیکرٹری جہلم، آر ٹی سیکرٹری منڈی بہاوالدین سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ ان روٹس پر چلنے والے بغیر لائسنس کے ڈرائیوروں کے خلاف کاروائی کرتے ہوئے اس معاملے کا سختی سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے