Corona1 28

پنڈدادنخان کرونا وائرس کی نئی لہر کو معمولی نہ سمجھا جائے

پنڈدادنخان(عدنان یونس) کرونا وائرس کی نئی لہر کو معمولی نہ سمجھا جائے کروناوائرس اور اس کے بعد آنے والے وائرسز سے محفوظ رہنے کے لئے نیچر کی طرف آنا ہوگا آج بھی ہمارے گاؤں کرونا سے محفوظ ہیں اس کی بڑی وجہ گاؤں کی زندگی نیچر کے قریب تر ہے ضرورت اس امر کی ہے کہ ماسک لگائیں، ہاتھ بار بار دھوئیں،چھ فٹ کا فاصلہ رکھیں۔ان خیالات کا اظہار حکیم لطف اللہ سیکرٹری جنرل پاکستان سوشل ایسوسی ایشن نے ایک پریس ریلیز میں کیا انہوں نے مزید کہا کہ نزلہ،زکام،کھانسی اور بخار کے مریض اپنے آپ کو الگ کر لیں، بزرگ اور عمر رسیدہ لوگ گھروں میں رہیں رش اور ہجوم سے بچیں، قوت مدافعت کو مظبوظ کریں۔فضائی آلودگی دھند اور سموگ کرونا کے جراثیموں کی محفوظ پناہ گاہ ہیں اس سے بچنے کے لئے دھند اور سموگ کو روکنا ہوگا فصلوں کی باقیات شہروں اور گلی کوچوں میں ٹائر اور پلاسٹک جلانے سے پرہیز کرنا ہوگا بھٹوں کے دھوئیں کو بھی روکنا ہوگا ہر ماہ 20 لاکھ موٹرسائیکلوں اور لاکھوں چھوٹی گاڑیوں کا اضافہ ہورہا ہے دھواں چھوڑنے والی گاڑیوں کو بھی کنٹرول کرنا ہوگا دھند اور فوگ کے دنوں میں بڑی گاڑیوں کے سفر کو فروغ دیں۔احتیاط کریں آٹھ سے دس گھنٹے نیند لازمی لیں دھوپ انجوائے کریں، ورزش کو معمول بنائیں، دن میں ایک دو بار بہاپ ضرور لیں، کھانا گرم اور تازہ کھائیں،کھانا بھوک لگنے پر کھائیں۔کرونا سے ڈرنا نہیں لڑنا ہے اور احتیاط کرنی ہیلہسن ایک جوا روزانہ کاٹ کر، شہد خالص ایک سے دو چمچ ایک لیموں، ادرک پودینہ کا قہوہ، کلونجی اور میتھی دانہ کا قہوہ، اناردانہ، ادرک، لہسن کی چٹنی، نیچرل گوشت(دیسی مرغا،بیف،مٹن وغیرہ)کا شوربہ اور یخنی لیں۔ بلنگو اور چھلکا اسپغول کا استعمال کریں۔فروٹ اور سبزیوں کا استعمال کریں۔ سردیوں میں ڈرائی فروٹ جس میں کاجو، مغز پستہ، مغز بادام، مغز اخروٹ، سوگی چلغوزہ اور کھجور کا استعمال معمول بنائیں۔میتھی ہر سالن کا حصہ بنائیں، پیاز اور ہلدی کا بھی استعمال لازم کریں، چینی کی بجائے دیسی شکر اور گڑ کا استعمال کریں، کولڈ ڈرنکس، تمام فاسٹ فوڈز چٹ پٹے کھانے، برف اور ٹھنڈے پانی، بیکری آئٹمز سے اجتناب کریں۔