72

اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل میں چین کی پیش کردہ قرارداد منظورکر لی گئی

اقوام متحدہ :اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کے 46 ویں اجلاس میں چین کی جانب سے پیش کردہ قرارداد کی منظوری دی گئی جس میں انسانی حقوق کے شعبے میں تعاون سے باہمی مفادات کو فروغ دینے کی اپیل کی گئی ہے۔چینی ریڈیو کے مطابق قرارداد میں تمام ممالک سے اپیل کی گئی ہے کہ وہ کثیرالجہتی تعاون پر عمل پیرا ہوں ، انسانی حقوق کے شعبےمیں تعمیری مذاکرات اور تعاون کریں ، تکنیکی امداد اور صلاحیت کو آگے بڑھائیں ، تعاون سے باہمی مفادات کو فروغ دیں اور مشترکہ طور پر انسانیت کے مساوی معاشرے کی تعمیر کریں۔ اس قرارداد میں کووڈ-19 وبا سے موثر انداز میں نمٹنے اور ترقی پذیر ممالک کی سستی ویکسین تک رسائی کے لیے فعال بین الاقوامی تعاون کی بھی حمایت کی گئی ہے۔

اقوام متحدہ کے جنیوا دفتر اور سوئٹزرلینڈ میں دوسری بین الاقوامی تنظیموں میں چین کے مستقل نمائندہ چن شو نے انسانی حقوق کونسل میں قرارداد کے مسودے پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ کووڈ-19 وبا سے ایک مرتبہ پھر یہ ظاہر ہوا ہے کہ تمام ممالک کو مشاورت اور تعاون کو مضبوط ، کثیرالجہتی پر عمل درآمد ، عالمی چیلنجوں سے موثر انداز میں نمٹنے اور دنیا کے امن و ترقی کو فروغ دینا چاہیے۔ چین نے انسانی حقوق کےشعبےمیں تعاون کی بدولت باہمی مفادات کو فروغ دینے اور عالمی برادری کی متفقہ امنگوں پر عمل پیرا ہونے کی تجویز پیش کی ہے۔ اس سے تمام فریقوں کے درمیان ہم آہنگی اور باہمی اعتماد سازی کو فروغ دینے ، عملی تعاون کو آگے بڑھانے اور انسانی حقوق کے فروغ اور تحفظ کے مقصد کو حاصل کرنے میں مدد ملے گی۔