Shahriar Khan Afridi 7

نریندرا مودی کا جنگی جنون علاقائی اور عالمی امن کیلئے خطرہ ہے.

نریندرا مودی کا جنگی جنون علاقائی اور عالمی امن کیلئے خطرہ ہے.

مظفرآباد ، آزاد کشمیر – پارلیمانی کمیٹی برائے کشمیر برائے شہریار خان آفریدی نے اتوار کو کہا ہے کہ بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کا جنگی جنون علاقائی اور عالمی امن کے لئے خطرہ ہے اور عالمی رہنماؤں کو پاکستان میں بھارتی حکومت کے ریاستی دہشت گردی کے حوالے سے پیش کردہ ثبوتوں پر فوری ایکشن لینا ہوگا.
ان خیالات کا اظہار شہریار آفریدی نے یہاں بروز اتوار سی ایم ایچ اسپتال کے دورے کے موقع پر لائن آف کنٹرول (ایل او سی) پر بھارتی گولہ باری سے زخمی ہونے والے عام شہریوں کی خیریت دریافت کرنے کے بعد میڈیا سے گفتگو کر تے ہوئے کیا۔
صدر آزاد جموں و کشمیر سردار مسعود خان اور دیگر اہلکار بھی اس موقع پر موجود تھے. شہریار آفریدی نے کہا کہ وہ وزیر اعظم عمران خان کی ہدایت کے مطابق زخمیوں کی عیادت کر رہے ہیں تاکہ وہ زخمی کشمیریوں اور ان کے اہل خانہ کو بہترین سہولیات کو یقینی بنائیں۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان اپنے کشمیری بھائیوں کے شانہ بشانہ کھڑا ہے اور پاکستان بھارتی ناجائز قابض افواج کے خلاف کشمیریوں کو سفارتی ، اخلاقی اور سیاسی مدد فراہم کرتا رہے گا۔
انہوں نے کہا کہ آج ہندوستان کے وزیر اعظم مودی نے دیوالی کے موقع پر امن و محبت کا پیغام دینے کی بجائے راجستان میں فوجی وردی پہن کر ٹینک پر سواری کرکے ایک بار پھر بھارت کے جنگی جنون اور ہمسایہ ممالک کے خلاف اپنے ناپاک عزائم کا اعادہ کیا ہے.
انہوں نے کہا کہ ہم ہندوستان کے توسیع پسندانہ عزائم کا مقابلہ کریں گے۔ انہوں نے اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل انتونیو گٹیرس اور دیگر عالمی رہنماؤں سے درخواست کی کہ وہ بھارتی ریاستی دہشت گردی کے پاکستان کی طرف سے پیش کردہ شواہد کا نوٹس لیں اور بھارت کے خلاف کارروائی کریں۔
انہوں نے کہا کہ دنیا کو اب بھارت کے حمایت یافتہ دہشت گرد گروپ داعش کے خلاف جنگ کرنا ہوگی۔ افغانستان کو بھارت کو اپنی سرزمین استعمال کرنے کی اجازت نہیں دینی چاہئے۔ ہم نے چار دہائیوں سے چالیس لاکھ افغان مہاجرین کی دل کھول کر میزبانی کی ہے اور افغان امن عمل کو کامیاب ہونے میں بھی مدد فراہم کی ہے۔ افغانستان کو اب لازمی طور پر دشمن قوتوں اور بھارتی انٹیلیجنس کو اجازت دینا ہوگی۔ انہوں نے مزید کہا کہ افغانستان حکومت کو چاہیے کہ وہ بھارتی انٹیلیجنس اور دیگر دہشت گرد تنظیموں کو پاکستان کو غیر مستحکم کرنے کے لئے افغان سرزمین استعمال کرنے کی اجازت نہ دے.
آفریدی نے کہا کہ کنٹرول لائن پر لوگ پاکستان کی حمایت سے خوش ہیں اور پاکستان کے لئے کسی بھی قربانی کے لئے تیار ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہندوستان اپنے توسیع پسندانہ عزائم میں کبھی کامیاب نہیں ہوگا۔
“ہندوستان اپنے تمام ہمسایہ ممالک اور خطے کے ممالک سے دشمنی پر کمربستہ ہوگیا ہے۔
آفریدی نے کہا کہ کنٹرول لائن فائر بندی کی بھارت کی مسلسل اور بلا روک ٹوک خلاف ورزی اقوام متحدہ اور عالمی برادری کے لئے چیلنج ہے۔
انہوں نے کہا کہ ایک طرف بھارت رائزنگ انڈیا کا نعرہ بلند کرتا ہے جبکہ اس کے برعکس اس نے اپنے توسیع پسندانہ ایجنڈے کے تحت پورے خطے کا امن خطرہ میں ڈال دیا ہے۔
انہوں نے زخمی کشمیریوں کو بروقت طبی امداد کے لئے سی ایم ایچ ڈاکٹروں اور وزیر اعظم آزادکشمیر کی جانب سے فوری مدد کی فوری تعریف کی۔
انہوں نے کہا ، “ایل او سی پر رہنے والے کشمیریوں کے عزم کو سلام ہے جو ہندوستانی گولہ باری کے خلاف مزاحمت کی علامت بن چکے ہیں۔ میں کنٹرول لائن اور ورکنگ باؤنڈری پر دشمن کا مقابلہ کرنے والی ہماری بہادر افواج کی بہادری کو بھی سلام پیش کرتا ہوں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں