زیر علاج نوازشریف 92

نواز شریف کو دل کا دورہ پڑا، رپورٹ

لاہور: پاکستان کے سابق وزیراعظم اور مسلم لیگ ن کے تاحیات قائد نوازشریف کو دل کا دورہ پڑا ہے۔ابتدائی پورٹ کے مطابق نوازشریف کا ٹریپ آئی اور ٹریپ ٹی ٹیسٹ مثبت آئے ہیں اور سابق وزیراعظم کو خون پتلا کرنے والی ادویات شروع کرادی ہیں۔ذرائع نے ہم نیوز کو اطلاع دی ہے کہ سابق وزیراعظم کو گزشتہ روز انجائنا کا شدید درد ہوا جس کے بعد معالجین نے دل کے دورہ پڑنے کے خدشہ ظاہر کیا۔‘نواز شریف کے خون کے دھبے کم ہونا شروع ہوگئے، شوگر اور…اطلاعات کے مطابق انجائنا کی موجودہ علامات سے دل کا دورہ پڑنے کے امکانات بڑھ گئے جس کے پیش نظر پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی کے سربراہ کو ایمرجنسی میں بلایا گیا۔سابق وزیر اعظم کا طبی معائنہ بھی کیا گیا جس سے معلوم ہوا کہ دل میں اینزائمز (پروٹین مالیکیولز) کی تعداد زیادہ ہے۔ پلیٹ لیٹس میں اتار چڑھاؤ بھی انجائنا کی تکلیف کا سبب بنا۔ذرائع کے مطابق معالجین دل کی موجودہ تکلیف کی وجوہات جاننے کی کوشش کر رہے۔ سابق وزیراعظم دل کے عارضے میں بھی مبتلا ہیں اور ان کے دو آپریشن پہلے ہو چکے ہیں جس کے سبب اس وقت دل کی تکلیف مزید خطرناک ثابت ہوسکتی ہے۔خیال رہے کہ نواز شریف 5 رز سے سروسز اسپتال میں زیر علاج ہیں جب کہ ان کا بلڈ پریشر اور بلڈ شوگر بدستور ذیادہ ہے۔گزشتہ روز نواز شریف کی ادویات میں ردو بدل کیا گیا اور مختلف ٹیسٹ بھی کرائے گئے تھے۔سروسز اسپتال کے چھ رکنی میڈیکل بورڈ نے نواز شریف کا آئی وی آئی جی انجکشنز کا ٹریٹمنٹ جاری رکھنے کا فیصلہ کیا ہے اور 4 سے 5 روز انجکشنز کا کورس جاری رکھا جائے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں