127

بھٹہ خشت پر جبری مشقت اور چائلڈ لیبر کسی صورت بھی برداشت نہیں ہوگی،

جہلم(چوہدری سہیل عزیز) بھٹہ خشت پر جبری مشقت اور چائلڈ لیبر کسی صورت بھی برداشت نہیں ہوگی، ایسا ہونے کی صورت میں بھٹہ خشت مالک کو قانونی کاروائی کا سامنا کرنا پڑے گا، اے ڈی لیبر نے چیکنگ کرتے ہوئے 2 مالکان کے خلاف ایف ائی آرز درج کروائی، اسسٹنٹ کمشنرز اس حوالے سے چیکنگ کو مزید سخت کرنے کی ہدایات دی۔ان خیالات کا اظہار ڈپٹی کمشنر جہلم محمد سیف انور جپہ نے ڈسٹرکٹ وجیلینس کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ کم عمر بھٹہ خشت پر کام کرنیوالے متعدد مزدوروں انکی فیملیز کے شناختی کارڈ بنوا کر انہیں فراہم کر دیے گئے ،230 سوشل سکیورٹی کارڈز بھی جاری کیے جا رہے ہیں، بھٹہ خشت مزدوروں کے زیر تعلیم بچوں کو وظیفہ کی ادائیگی کیلئے ابتک سینکڑوں خدمت کارڈ جاری کئے جاچکے ہیں۔انہوں نے کہا کہ سوشل سکیورٹی ڈیپاڑٹمنٹ بھٹہ خشت مزدوروں کی رجسٹریشن کا عمل بہتر کریں ان کی بہتری کے لئے فعال کردار ادا کرے اس مقصد کیلئے سوشل سکیورٹی ڈیپارٹمنٹ سو فیصد بھٹہ خشت کا سروے کرے ۔ مزدور وں کی درست تعداد کے تعین کی ہدایت کی تاکہ انکی فلاح و بہبود کیلئے پالیساں مرتب کی جاسکیں۔ ڈپٹی کمشنر نے ہدایت کی اسسٹنٹ ڈائریکٹر لیبر پنجاب کے تمام اضلاع میں بھٹہ خشت مزدوروں کو دی جانیوالی اجرت کے بارے میں معلومات حاصل کریں ، بھٹہ مزدوروں، مالکان اور لیبر یونین کے ساتھ مشترکہ اجلاس منعقد کیا جائے اور حکومت کی طرف سے مقرر کردہ اجرت کی ادائیگی یقینی بنائی جائے ۔ اجلاس میں اسسٹنٹ ڈائریکٹر لیبر تنویر ہمایوں، صدر بھٹہ خشت ایسویسی ایشن چوہدری نثار احمد ایڈووکیٹ، نمائندہ سوشل سکیورٹی کے علاوہ بھٹہ مالکان اور مزدور یونین کے نمائندگان نے شرکت کی۔

کیٹاگری میں : Uncategorized

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں