136

جہلم کی مصروف ترین شاہراہ روہتاس پر بڑھتی ہوئی ٹریفک سے حادثات میں اضافہ

جہلم(چوہدری سہیل عزیز)جہلم کی مصروف ترین شاہراہ روہتاس پر بڑھتی ہوئی ٹریفک سے حادثات میں اضافہ،آئے روز قیمتی جانوں کا ضیاع،روہتاس روڈ جو کہ کئی سالوں سے مرمت نہ ہونے کی وجہ سے کھنڈرات میں تبدیل ہو چکی ہے،اب ٹریفک زیادہ ہونے کی وجہ سے حادثات معمول بن چکے ہیں ہر مہینے قیمتی جانوں کا نقصان ہو رہا ہے،،کئی سالوں سے مرمت کا کام نہیں ہوا،پرونیشنل ہائی وے اتھارٹی کے ذمہ دار مسلسل اپنے فرائض سے غفلت برت رہے ہیں،تفصیلات کے مطابق جہلم کی مصروف ترین شاہراہ روہتاس روڈ جو کہ پنڈدادنخان سے آنے والی ٹریفک کے استعمال میں بھی آتی ہے،اس روڈ پرٹریفک کا بہت زیادہ بوجھ ہے اس کے علاوہ ملوٹ میں کریش مشینوں سے لوڈ ہو کر آنے والے ہیوی ٹرک اس روڈ کی بربادی کی بنیادی وجہ ہیں،بائی پاس ہونے کے باوجود ہیوی ٹریفک چند کلو میٹر کے سفر کی کمی کی وجہ سے اس روڈ کا رخ کرتی ہیں حالانکہ ڈھوک منور تا جی ٹی روڈ نزد پنجاب یونیورسٹی کیمپس بائی پاس کی سہولت ہے روہتاس روڈ اب مکمل طور پر ٹوٹ چکی ہے اورجگہ جگہ گڑھے پڑ چکے ہیں،جس کی وجہ سے مقامی آبادی سخت پریشان ہے اور گڑھے پڑنے کی وجہ سے روزانہ کی بنیاد پر حادثات ہو رہے ہیں، واحد رابطہ سڑک پر اب سفرکرنا انتہائی اذیت ناک ہے،روہتاس روڈ کے درجنوں دیہاتوں کے عوام نے ڈپٹی کمشنر جہلم محمد سیف انور جپہ سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اس روڈ کی حالت زار بہتر بنانے کے لیے ذاتی دلچسپی لیں اور پرونیشنل ہائی وے کے ذمہ داران کواحکامات جاری کریں کہ وہ اس روڈ کی جلدازجلد مرمت کریں تاکہ عوام کو اس اذیت سے چھٹکارا حاصل ہوسکے۔

کیٹاگری میں : Uncategorized

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں