Abuse 21

کم عمربچوں وبچیوں کیساتھ زیادتی کے واقعات میں لاہور پہلے نمبر پر

لاہور : پولیس رپورٹ میں 10 سال سے کم عمر بچوں بچیوں کے حوالے سے لرزہ خیز انکشاف، انسان نما درندوں نے شہر میں 108 جبکہ پنجاب بھرمیں 668 کم عمر بچوں بچیوں کو حوس کا نشانہ بنا ڈالا۔ 4 بچوں اور 3 بچیوں کے ساتھ زیادتی کے بعد قتل کردیا گیا ۔

تفصیلات کے مطابق ساڑھے 5 ماہ میں 10 سال سے کم عمر بچوں و بچیوں کیساتھ زیادتی کا ریکارڈ سامنے آگیا۔ کم عمر بچوں وبچیوں کیساتھ زیادتی کے واقعات کی رپورٹ میں بڑا انکشاف ہوا ہے۔ پولیس ریکارڈ کے مطابق کم عمربچوں وبچیوں کے ساتھ زیادتی کے واقعات میں صوبائی دارالحکومت پہلے نمبر پر رہا ہے۔

صوبہ بھر میں 668 کم عمر بچوں وبچیوں کیساتھ زیادتی کے واقعات ہوئے۔ لاہور میں 68 بچوں کیساتھ بدفعلی، ایک کو قتل کردیا گیا جبکہ شہر میں41 کم عمر بچیوں کیساتھ زیادتی کے واقعات رپورٹ ہوئے ہیں۔

لاہور میں زیادتی کے 15 کیسز جعلی ثابت ہونے پر منسوخ کردئیے گئے، شہر میں کم عمر بچوں کیساتھ زیادتی کے 30 کیسز زیرِ تفتیش ہیں۔ پنجاب بھر میں 445 بچوں کے ساتھ بدفعلی اور 3 کو قتل کر دیا گیا۔ صوبہ بھر میں 186 کم عمر بچیوں کے ساتھ زیادتی جبکہ 4 کو قتل کیا گیا ہے۔ پنجاب بھرمیں کم عمر بچوں کیساتھ زیادتی کے 150 کیسز زیرِ تفتیش ہیں۔