Shahbaz Sharif 18

بیرون ملک روانگی، حکومت نے شہباز شریف کیخلاف اپیل واپس لے لی

اسلام آباد: حکومت نے شہباز شریف کی بیرون ملک روانگی کے خلاف اپیل واپس لے لی۔مسلم لیگ ن پاکستان کے صدر اور قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف کی بیرون ملک روانگی کیس سے متعلق سپریم کورٹ میں لاہور ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف اپیل کی سماعت ہوئی۔
سپریم کورٹ کے 2 رکنی بینچ نے حکومت کی اپیل واپس لینے پر سماعت نمٹا دی۔ اٹارنی جنرل خالد جاوید اور لاہورہائی کورٹ کے نمائندے عدالت میں پیش ہوئے جبکہ شہباز شریف کی جانب سے سینیٹر اعظم نذیر تارڑ عدالت میں پیش ہوئے۔جسٹس اعجاز الاحسن نے کہا کہ ریکارڈ کے مطابق لاہور ہائی کورٹ میں درخواست داخل ہوئی۔ جمعہ کو عدالت میں چائے کا وقفہ نہیں ہوتا۔
جسٹس سجاد علی شاہ نے شہباز شریف کے وکیل سے استفسار کیا کہ کیا آپ کے مؤکل اب بھی بیرون ملک جانا چاہتے ہیں ؟انہوں نے کہا کہ فوجداری مقدمات میں ملزم کی نقل حرکت کو کیسے محدود کیا جا سکتا ہے؟ لاہور ہائی کورٹ میں وفاقی حکومت کا مؤقف سنا گیا۔
جسٹس اعجاز الاحسن نے ریمارکس دیے کہ لاہور ہائی کورٹ میں اٹارنی جنرل دفتر کو جواب جمع کرانے کا وقت نہیں دیا گیا۔اٹارنی جنرل خالد جاوید نے مؤقف اختیار کیا کہ اپیل میں عدالت پر کوئی الزام نہیں لگایا گیا۔ عدالت وفاق کی اپیل کو دو ٹرمز پر نمٹا دے اور لاہور ہائیکورٹ کا بلیک لسٹ سے نام نکالنے کا فیصلہ مثال نہ بنے۔
جسٹس اعجاز الاحسن نے ریمارکس دیے کہ یہ رجحان بن گیا ہے ملزم کو پکڑ لیتے ہیں اور نیب ریفرنس میں 140 گواہان کے نام شامل کر دیتا ہے۔شہباز شریف نے سپریم کورٹ کو توہین عدالت کی پیروی نہ کرنے کی یقین دہانی کرائی۔ سپریم کورٹ نے ریمارکس دیے کہ شہباز شریف کو جس انداز میں ریلیف دیا گیا وہ کسی کے لیے مثال نہیں بن سکتا۔