pm-imran-khan 57

وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت قومی رابطہ کمیٹی برائے سمال اینڈ میڈیم انٹرپرائزز کا اجلاس۔

وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت قومی رابطہ کمیٹی برائے سمال اینڈ میڈیم انٹرپرائزز کا اجلاس۔

وفاقی وزیر خزانہ ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ، وزیر صنعت محمد حماد اظہر، معاون خصوصی عثمان ڈار، چیرمین سرمایہ کاری بورڈ، صنعت، کامرس، خزانہ، توانائی، پیٹرولی اور قانون ڈیویژن کے سیکریٹری صاحبان، چیرمین ایف بی ار، ڈپٹی گورنر اسٹیٹ بینک، کمشنر سکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن آف پاکستان، سی ای او سمیڈا، ایم ڈی پبلک پروکیورمنٹ ریگولیٹری اتھارٹی اور سینئر افسران اجلاس میں موجود۔

ویڈیو لنک سے چیف سیکریٹری سندھ اور گلگت بلتستان، پنجاب، خیبر پختونخوا، بلوچستان، آزاد جموں کشمیر کے سیکرٹریز صنعت، سی ای او ٹریڈ ڈیولپمنٹ اتھارٹی آف پاکستان بھی شریک۔

اجلاس کو آگاہ کیا گیا کے ایس ایم ایز کو مالی معاونت فراہم کرنے کے لیے تمام شراکت داروں سے مشاورت کی جارہی ہے۔ اس ضمن میں ایس ایم ای فنڈ بھی قائم کیا جائے گا۔

ایس ایم ایز کے فروغ کی خاطر قانونی, انتظامی اور ریگولیٹری مسائل کو جلد حل کرنے کے لیے اہداف مقرر کر لیے گئے ہیں۔

چھوٹے اور درمیانے کاروباری طبقے کی سہولت کے لیے ٹیکس فارم کو آسان بنایا جا رہا ہے اور رجسٹریشن پورٹل پر کام جاری ہے۔

سمیڈا کی استعداد کار بڑھانے کے لیے اس کی تنظیم نو کی جارہی ہے تاکہ کاروباری طبقے کو معاونت فراہم کی جائے۔

صوبوں میں ورکنگ گروپس قائم ہو چکے ہیں جو صوبوں میں چھوٹے اور درمیانے کاروبار کو مدد دیں گے۔

ایس ایم ایز کا ڈیٹا بیس ترجیحی بنیادوں پر اپ ڈیٹ کیا جا رہا ہے جس کی بنیاد پر حکومت ایس ایم ایز کو بروقت سہولت دے سکے گی۔

وزیر اعظم نے کہا کے چھوٹے اور درمیانے درجے کے کاروبار معیشت کا اہم جزو ہیں۔ ان کو فروغ دے کر معیشت مستحکم ہو گی اور روزگار کے مواقع بڑھیں گے۔

وزیر اعظم نے کہا کے تمام معاشی اعشاریے مثبت سمت میں جا رہے ہیں اس لیے ان میں مزید بہتری کے لیے ایس ایم ایز کا فروغ ضروری ہے۔

وزیر اعظم نے ایس ایم ایز کے فروغ کے لیے مقرر اہداف کو جلد مکمل کرنے کی ہدایت دی۔