Twin Cities 15

جڑواں شہروں میں میں وقفے وقفے سے تیز بارش

اسلام آباد جڑواں شہروں میں میں وقفے وقفے سے تیز بارش اور ممکنہ سیلاب کے خدشے کے پیش نظر وفاقی دارالحکومت کے پانچ علاقوں میں ریڈ الرٹ جاری کر دیا گیا ۔میٹر وپولیٹن کارپوریشن اسلام آباد مئیر اسلام آباد شیخ انصر عزیز کے دفتر سے جاری بیان کے مطابق ایم سی آئی کے تمام ذیلی دفاتر کو ہائی الرٹ رہنے کی ہدایات جاری کی گئی ہیں جبکہ تمام عملے کی چھٹیاں منسوخ کردی گئی ہیں اور انہیں 24گھنٹے دفاتر میں موجود رہنے کا کہا گیا ہے تمام متعلقہ اداروں سے کہا گیا ہے کہ تین شفٹوں میں عملے کی موجودگی کو یقینی بنایا جائے تاکہ انکے متعلقہ علاقوں میں کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹا جاسکے ۔ وفاقی دارالحکومت میں غوری ٹاو¿ن فیز5، سواں گارڈن، آئی 8 اور آ ئی 9 میں اربن فلڈنگ کا خدشہ ہے جبکہ نالہ کورنگ کے اطراف آبادیوں میں بھی سیلاب کا خدشہ ہے۔ اسلام آباد میں قائم کچی آبادیوں میں بھی سیلاب آ سکتا ہے، ممکنہ سیلابی صورتحال کے باعث اسلام آباد کے تمام ہسپتالوں میں بھی ہائی الرٹ جاری کر دیا گیا ہے۔اسلام آباد میں سیلابی صورتحال سے بچنے کیلئے 12 ریلیف کیمپ قائم کر دیئے گئے ہیں، ریلیف کیمپس اسلام آباد کے 12 سرکاری سکولوں میں قائم کیے گئے، تیز بارش کے باعث تمام متعلقہ اداروں کو ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کیلئے تیار رہنے کی ہدایت کر دی گئی ہے۔ڈائریکٹر ایمر جنسی اینڈ ڈیزاسٹر منیجمنٹ جوائنٹ فلڈ ریلیف سیل کے سربراہ کی حیثیت سے فوکل پرسن کے طور پر کام کریگا اور ضرورت پڑنے کی صورت میں مشینری ،عملہ اور ساز وسامان کے انتظامات کریگا ۔ ایمر جنسی اینڈ ڈیزاسٹر منیجمنٹ کے کنٹرول روم مثلاً فائربریگیڈ ہیڈکوارٹرز کے یونیورسل نمبرز ،وائرلس فون کے ساتھ ساتھ موبائل نمبر ز ہنگامی صورتحال کے پیش نظر ایم سی آئی اور آئی سی ٹی اے کے درمیان رابطے کےلئے دستیاب ہونگے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں