Support Program 18

سرحد رورل سپورٹ پروگرام،،،

سرحد رورل سپورٹ پروگرام نے کرونا وائریس سے بچاؤ کیلئے ڈسٹرکٹ ہیڈ کواٹرز ہسپتال کو 34لاکھ روپے مالیت کا امدادی سامان عطیہ کے طور پر دیا۔
چترال(گل حماد فاروقی) سرحد رورل سپورٹ پروگرام نے پاٹریپ فاؤنڈ یشن کی تعاون سے کرونا وایریس سے بچاؤ کا حفاظتی سامان ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹرز ہسپتال چترال کو مفت فراہم کیا جن کی قیمت 3.4 ملین بنتی ہے۔ اس امدادی سامان میں ماسک، سرجیکل ماسک، کور آل سوٹ، فیس شیڈ، سرجیکل دستانے، سرجیکل ہیڈ کور، سرجیکل شو اور دیگر سامان شامل ہیں۔
اس موقع پر ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹرز ہسپتال چترال میں ایک تقریب بھی منعقد ہوئی جس میں ڈپٹی کمشنر چترال مہمان حصوصی تھے۔ تقریب میں SRSP کے چیف ایگزیکٹیو آفیسر شہزادہ مسعود الملک نے DHQ ہسپتال کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹر شمیم کو یہ امدادی سامان حوالہ کیا۔
اس موقع پر انہوں نے کہا کہ SRSP نے اس سے پہلے بھی صوبائی حکومت کو 12.9 ملین روپے کی امدادی سامان فراہم کیا تھا اور ہمارا ادارہ مصیبت کے ہر گھڑی میں حکومت کے شانہ بشانہ کھڑی رہتی ہے۔
ڈپٹی کمشنر نے بھی ایس آر ایس پی کی خدمات کو سراہا کہ وہ پسماندہ علاقوں میں تعمیر و ترقی کے کاموں میں حکومت کے ساتھ تعاون کررہا ہے۔
تقریب میں کرونا وائریس کے حلاف فرنٹ لائن پر لڑنے والوں کو تعریفی اسناد بھی دئے گئے۔
یہ تعریفی سند SRSP کے چیف ایگزیکٹیو شہزادہ مسعود الملک، ڈسٹرکٹ پروگرام منیجر طارق احمد، ایل ایچ ڈبلیو پروگرام کے کو آرڈینیٹر ڈاکٹر سلیم سیف اللہ، اے کے یچ ایس کے انور بیگ، تاجر یونین دروش کے صدر حاجی گل نواز، ڈی ایچ او چترال ڈاکٹر حید رالملک، تھانہ دروش، تھانہ چترال اور عشریت کے ایس ایچ اوز، چترال لیویز کے جوانوں اور دیگر متعلقہ لوگوں کو تعریفی اسناد پیش کئے۔
اس موقع پر پیرامیڈیکل ایسوسی ایشن کے نائب صدر نے شکوہ کیا کہ ڈی سی چترال نے نہ تو ہمیں کوئی تعریفی سند دیا نہ ہمیں شاباس دی بلکہ ہمارا نام تک نہین لیا جس سے ہم کافی مایوس ہوگئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں