سرکاری اراضی پر تعمیرات کے خلاف آپریشن کے دوران فائرنگ سے دو اہلکار زخمی

By Usman Ali مئی 23, 2024

مر ی سرکاری اراضی پر تعمیرات کے خلاف آپریشن کے دوران فائرنگ سے دو اہلکار یاسر فیاض اور دانیال عزیز شدید زخمی جبکہ اے ڈی سی آر شہریار شیرازی بال بال بچ گے پولیس نے فائرنگ کرنے والے وسیم نامی شخص جو موقع پر اسلحے سمیت گرفتار کرلیا ڈپٹی کمشنر نے شدید زخمی ہونے والے اہکار دس لاکھ امداد دینے اور بازو زخمی کو پانچ لاکھ امداد دینے کا اعلان کرتے ہوئے سخت قانونی کاروائی کا عندیہ دیا ہے تفصیلات کے مطابق مری شہر کے دل اور خوبصورت ترین علاقے اپر جھیکا گلی روڈ ڈگری کالج کے قریب محکمہ جنگلات کی زمین پر طویل عرصے سے قبضہ کرکے تعمیرات کر کے رہاہش پذیر سرفراز نامی شخص کی طرف محکمہ جنگلات کے اہکاروں کی ملی بھگت سے مزید تعمیرات کر رہا تھا جس کو متعدد مرتبہ میونسپل کارپوریشن مری کے اہکاروں نے تعمیرات کرنے سے روکنے کی کوشش کی لیکن اس نے تعمیرات کاسلسلہ جاری رکھا جس کے خلاف مری میں نئے تعنیات ہونے والے دبنگ اے ڈی سی آر شہریار شیرازی نے بدھ کے روز میونسپل کارپوریشن مری کے انفورسمنٹ عملے کے ہمراہ آپریشن کرنے کی کوشش کی تاکہ سرکاری اراضی کو واگزار کرانے کے ساتھ ساتھ قبضہ گروپ کی طرف سے کی جانے والی تعمیرات کو گرایا جاسکے لیکن اس دوران پراوفشینل قبضہ گروپ کے سرفراز نامی شخص کے ساتھی وسیم نامی شخص نے میونسپل کارپوریشن مری کے عملے اور اے ڈی سی آر شہریار شیرازی اور عملے پر اسٹیٹ فائرنگ شروع کردی جس نتیجے میونسپل کارپوریشن مری کے انفورسمنٹ عملے دو اہکار یاسر فیاض دانیال عزیز شدید زخمی ہوگئے جبکہ اے ڈی سی آر شہریار شیرازی بال بال بچ گئے واقع کی اطلاع ملتے ہی ڈی ایس پی مری بھاری نفری کے لے موقع پر پہنچ گے اور وسیم نامی شخص اور دیگر کو گرفتار کرلیا اور زخمی ہوئے والے میونسپل کارپوریشن مری اہکاروں پولیس کی نفری کے ہمراہ سول ہسپتال مری منتقل کیا جہاں پر میونسپل کارپوریشن مری کے اہکاروں یاسر فیاض اور دانیال کو طبعی امداد دی جا رہی ہے ڈپٹی کمشنر مری کا گولی لگنے والے اہکار کو دس لاکھ اور تھوڑا زخمی کو پانچ لاکھ روپے دینے کا اعلان کیا ہے اس موقع پر ٹی ایم اے ایمپلایز یونین نے ہنگامی اجلاس بھی طلب کر لیا جس میں ائندہ کے لائحہ عمل کے بارے میں فیصلے کئے گئے زخمی ہونے والے میونسپل کارپوریشن کے ملازمین کو ہسپتال میں دیکھنے کے لیے ایم این اے راجہ اوسامہ اشفاق سرور بھی پہنچ گئے اور ڈاکٹروں کو انکی مکمل دیکھ بھال کی ہدایات بھی کیں

About Author

Related Post