جنگلات کی بے دریغ کٹائی درختوں کو مولی گاجر کی طرح کاٹا جا رہا ہے فضائی آلودگی سے ملک کو بچانے کیلئے حکومت یاکستان کو فوری ایکشن لینا پڑئے گاراجہ طاہر

By Usman Ali دسمبر 7, 2023

کہوٹہ (ندیم آزاد) سموگ اور فضائی آلودگی کی سب سے بڑی وجہ سے جنگلات کی بے دریغ کٹائی درختوں کو مولی گاجر کی طرح کاٹا جا رہا ہے فضائی آلودگی سے ملک کو بچانے کیلئے حکومت یاکستان کو فوری ایکشن لینا پڑئے گا زرعی زمینوں پر سوسائٹی کا بن جانا فصلوں کی باقیات کو آگ لگانا دھواں چھوڑتی گاڑیاں اور کارخانوں کا زہریلا دھواں اور مواد کو خالی جگہوں پر پھینک دینے سمیت اور پلاسٹک کے استعمال کو ختم کرنا ہو گا کیونکہ یہ سب چیزیں آلودگی کا سبب بن رہی ہے اس لیے حکومت کو فوری طور پر کاروائی کرنی ہو گی نہیں تو حالات دن خراب ہوتے جائیں گے سب سے پہلے دریاؤں نہروں؛ ندیوں کے کنارے نئی بننے والی سوسائٹی شہری علاقوں میں مقامی نسل کے درخت لگائیں لوگوں کو درختوں کے فوائد کے بارے میں تعلیم دیں گھروں کے چھتوں پر گملوں میں پودے لگائیں سرکاری زمینوں سکولوں؛ جنازہ گائیوں؛ اسپتالوں اور قبرستانوں میں درخت لگائیں محکمہ جنگلات کی ملی بھگت سے جو سرکاری جنگلات اور سڑکوں کے کناروں پر درختوں کی کٹائی ہو رہی ہے اس روک تھام میں اپنا قلیدی کردار ادا کریں جب تک ایمرجنسی نافذ کر کے یہ اقدامات نہیں کئے جائیں گے سموگ اور فضائی آلودگی کا مسئلہ حل نہیں ہو گا ان باتوں کا اظہار تحصیل کہوٹہ کے گاؤں ٹپیالی راجگان سے تعلق رکھنے والے راجہ طاہر حال مقیم (UK) نے ٹیلی فونک گفتگو میں کی انہوں نے مزید کہا کہ میں امید کرتا ہوں کہوٹہ میں فلاحی تنظیمیں جنگلات کی کٹائی روکنے میں اپنا بھرپور کردار ادا کریں گی

About Author

Related Post

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے