ٹانک میں پولیو ٹیم پر حملہ، دو پولیس اہلکار جاں بحق

پشاور:

خیبرپختونخوا (کے پی) کے ضلع ٹانک میں منگل کو مسلح افراد کے پولیو ٹیم پر حملے میں دو پولیس اہلکار ہلاک ہوگئے۔

پولیس کے مطابق فائرنگ سے کانسٹیبل پیر رحمان اور نثار جاں بحق ہوئے جن کی لاشوں کو اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔ ٹانک کے علاقے کوٹ اعظم میں پولیو ٹیمیں انسداد پولیو کے قطرے پلانے میں مصروف تھیں کہ مسلح افراد نے ان پر فائرنگ کردی۔

فائرنگ کے واقعے کے بعد پولیس اور سیکیورٹی فورسز کی بھاری نفری علاقے میں پہنچ گئی۔ انہوں نے جائے وقوعہ پر موجود عینی شاہدین کے بیانات لے کر شواہد اکٹھے کر کے تفتیش شروع کر دی ہے۔

پڑھیں: شمالی وزیرستان میں دو پولیس اہلکار اور پولیو ورکر کو گولی مار کر ہلاک کر دیا گیا۔

قومی انسداد پولیو مہم پیر کو کراچی، حیدرآباد اور جنوبی کے پی کے چھ اضلاع بنوں، لکی مروت، شمالی و جنوبی وزیرستان، ڈیرہ اسماعیل خان اور ٹانک میں شروع ہوئی۔

پولیو مہم 24 اگست تک جاری رہے گی۔

بلوچستان میں پولیو مہم 29 اگست سے 4 ستمبر تک جاری رہے گی۔

وفاقی وزیر صحت عبدالقادر پٹیل کے مطابق ملک کے دیگر حصوں میں پولیو ویکسینیشن مہم 22 سے 26 اگست تک شروع ہوگی۔

پاکستان میں رواں سال اب تک پولیو کے 14 کیسز رپورٹ ہو چکے ہیں۔

جواب دیں