دبئی ایئر پورٹ اپنے حامیوں کے لیے تیار ہے۔

دبئی:

اس کے ڈائریکٹر نے بدھ کو کہا کہ دبئی انٹرنیشنل ایئرپورٹ، جو ہوا بازی کا ایک بڑا مرکز ہے، نومبر میں شروع ہونے والے ٹورنامنٹ سے قبل ورلڈ کپ کے حامیوں کے لیے ٹرانزٹ سفر کو آسان بنانے میں مدد کے لیے تیار ہے۔

مشرق وسطیٰ کے کسی ملک میں منعقد ہونے والا پہلا ورلڈ کپ 20 نومبر کو قطر میں شروع ہونے والا ہے اور یہ 18 دسمبر تک جاری رہے گا۔

خلیجی ریاستوں نے خاص طور پر متحدہ عرب امارات کے ذریعے ٹرانزٹ میں شائقین کے لیے انتظامی طریقہ کار کو آسان کرنے پر اتفاق کیا ہے۔

دبئی ایئرپورٹس کے سربراہ پال گریفتھس نے اے ایف پی کو بتایا، "ہم دراصل امیگریشن کے کچھ طریقہ کار کو اکٹھا کر رہے ہیں جو درحقیقت دونوں ممالک کے درمیان اس منتقلی کو بہت آسان بنا دیں۔”

انہوں نے کہا کہ آن لائن چیک ان کا مطلب یہ ہوگا کہ عام طریقہ کار کو نظرانداز کیا جاسکتا ہے "اور پھر آپ بہت تیزی سے اندر اور باہر جاسکتے ہیں”۔

وبائی مرض سے پہلے، دبئی بین الاقوامی مسافروں کے لیے دنیا کا مصروف ترین ہوائی اڈہ تھا۔

اعداد و شمار بتائے بغیر، گریفتھس نے کہا کہ "ورلڈ کپ کے دوران ہر روز کافی تعداد میں پروازیں ہوں گی، جو شائقین کو قطری دارالحکومت دوحہ سے لے کر جائیں گی”، کئی ایئر لائنز کی درخواستوں کے بعد۔

انہوں نے کہا کہ وہ یہ بھی توقع کرتے ہیں کہ بہت سے لوگ "پیچھے جا رہے ہوں گے اور دبئی میں اپنے فرصت کے وقت سے لطف اندوز ہوں گے اور صرف میچوں کے لئے آگے پیچھے جائیں گے”۔

متحدہ عرب امارات اور قطر کے درمیان پروازیں گزشتہ سال جنوری میں سفارتی مفاہمت کے بعد تین سال سے زائد عرصے سے جاری بائیکاٹ کے خاتمے کے بعد دوبارہ شروع ہوئیں۔

2017 میں، متحدہ عرب امارات، سعودی عرب، بحرین اور مصر نے قطر پر اسلامی انتہا پسندی کی پشت پناہی کا الزام لگاتے ہوئے اس سے تعلقات منقطع کر لیے تھے۔

گریفتھس نے یہ بھی کہا کہ وہ دبئی کے ہوائی اڈے کے امکانات کے بارے میں پر امید ہیں۔

بدھ کو شائع ہونے والے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ سال کی پہلی ششماہی میں، اس نے 27.8 ملین مسافروں کو سنبھالا – جو کہ 2021 میں اسی مدت کے مقابلے میں 160 فیصد سے زیادہ ہے۔

اس نے کہا کہ تازہ ترین اعدادوشمار نے سال کی پہلی ششماہی کے دوران 2019 میں اسی عرصے کے دوران اس پری وبائی بیماری کا 67.5 فیصد ٹریفک ظاہر کیا۔


ِ
#دبئی #ایئر #پورٹ #اپنے #حامیوں #کے #لیے #تیار #ہے

اس خبر کو درجہ ذیل لنک سے حاصل کیا گیا ہے
(https://tribune.com.pk/story/2371818/dubai-airport-gears-up-for-supporters)

جواب دیں