خستہ حال سڑکیں کمر درد، جوڑوں کے درد میں اضافے کی بڑی وجہ ہیں۔

کراچی:

ریمیٹولوجسٹوں نے کمر درد اور جوڑوں کے درد میں مبتلا مریضوں کی تعداد میں "غیرمعمولی اضافہ” درج کیا ہے جو کہ ان کے خیال میں شہر کی سڑکوں کی خوفناک حالت کی وجہ سے ہے جو مون سون کی بارشوں کے بعد مزید خراب ہو گئی تھی۔

انہوں نے کہا کہ گزشتہ چھ مہینوں کے دوران نوجوانوں کی ایک بڑی تعداد، خاص طور پر بائیک چلانے والوں نے کمر درد اور جوڑوں کے درد کی شکایت کی ہے۔

ایک قدامت پسند اندازے کے مطابق، اس عرصے کے دوران کمر اور کولہے کے درد کے معاملات میں 30 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

کراچی پریس کلب میں حال ہی میں لگائے گئے ایک میڈیکل کیمپ میں ڈاکٹروں نے صحافیوں کا معائنہ کیا اور پتہ چلا کہ ان میں سے 90 فیصد کمر درد اور کولہے کے درد میں مبتلا تھے۔ کیمپ کا اہتمام پاک امریکن آرتھرائٹس سنٹر اور احد میڈیکل سنٹر نے مشترکہ طور پر کیا تھا۔

کیمپ میں 100 سے زائد صحافیوں اور ان کے اہل خانہ کا معائنہ کیا گیا جہاں مختلف طبی ٹیسٹ بھی کیے گئے۔

کیمپ میں پاک امریکن آرتھرائٹس سنٹر کی منیجنگ ڈائریکٹر ڈاکٹر صالحہ اسحاق کے علاوہ احد میڈیکل سنٹر کی میڈیکل ڈائریکٹر ڈاکٹر سمیرا غنی، ڈاکٹر فراز ہاشمی اور دیگر بھی موجود تھے۔

ڈاکٹر صالحہ اسحاق نے کہا کہ یہ ایک عام عالمی رواج ہے کہ سڑکیں بناتے وقت ان کی پائیداری کو مدنظر رکھا جاتا ہے۔ کئی ممالک میں 1950 میں بنی سڑکیں اب بھی اچھی حالت میں ہیں لیکن کراچی میں ہر سال بارشوں میں سڑکیں بہہ جاتی ہیں۔ شہر میں گزشتہ سال بنائی گئی سڑکیں چند ماہ قبل ہونے والی بارشوں میں بہہ گئیں۔ سڑکوں کی حالت انتہائی خستہ ہے جس کی وجہ سے شہریوں بالخصوص موٹر سائیکل سواروں میں کمر درد اور جوڑوں کے درد میں اضافہ ہو رہا ہے۔ گزشتہ 6 ماہ کے دوران ایسی شکایات میں 30 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

انہوں نے کہا کہ نوجوانوں کی ایک بڑی تعداد، خاص طور پر بائیک چلانے والے کمر اور کولہے کے درد میں مبتلا ہیں، انہوں نے مزید کہا کہ خراب سڑکوں سے ہر عمر کے لوگ متاثر ہوتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ پہلے جوڑوں کے درد کی شکایت خواتین میں زیادہ ہوتی تھی لیکن اب مردوں کی ایک بڑی تعداد خصوصاً نوجوان کمر درد کی شکایت کرتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ عالمی سطح پر یہ ایک عام رواج ہے کہ ٹھیکیداروں اور کمپنیوں کے نام سڑکوں پر لگائے جاتے ہیں، انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت کو بھی سڑکوں پر ٹھیکیداروں اور کمپنیوں کے نام کی تختیاں لگانی چاہئیں۔ انہوں نے تجویز دی کہ ناقص کوالٹی کا میٹریل استعمال کرنے والے ٹھیکیداروں پر پابندی لگائی جائے۔

ایکسپریس ٹریبیون میں 16 اکتوبر کو شائع ہوا۔ویں، 2022۔


ِ
#خستہ #حال #سڑکیں #کمر #درد #جوڑوں #کے #درد #میں #اضافے #کی #بڑی #وجہ #ہیں

(شہ سرخی کے علاوہ، اس کہانی کو مری نیوز کے عملے نے ایڈٹ نہیں کیا ہے اور یہ خبر ایک فیڈ سے شائع کیا گیا ہے۔)